اقوام متحدہ کی ایجنسی کی پناہ گزین خواتین کے فنڈ کے لئے شیخہ فاطمہ کے عطیہ کی تعریف

ابوظہبی، 21 مارچ، 2018 (وام) -- اقوام متحدہ کی ایجنسی برائے پناہ گزین کے متحدہ عرب امارات میں دفتر کے ڈائریکٹرٹوبی ہارورڈ نے پناہ گزینوں کے فنڈ کو دوبارہ فعال بنانے اور اس کے لئے ایک ملین ڈالر کا عطیہ دینے پر جنرل ویمنز یونین کی چیئرویمن، فیملی ڈیویلپمنٹ فاونڈیشن کی سپریم چیئرویمن اور مدرہوڈ اور چائلڈ ہوڈ کے لئے سپریم کونسل کی صدرشیخہ فاطمہ بنت مبارک کی تعریف کی ہے۔ یہ فنڈ ہزاروں پناہ گزین خواتین اور بچوں کو تحفظ دینے اور ان کے لئے ایک مہذب اور محفوظ زندگی کی فراہمی کے لئے مخصوص ہے.

ماؤں کے عالمی دن کے موقع پر اپنے ایک بیان میں انہوں نے شیخہ فاطمہ اور متحدہ امارات میں تمام ماؤں کو مبارکباد پیش کی اور کہا کہ "امارات کی ماں" امارتی لڑکیوں کے لئے ایک رول ماڈل ہیں اور ان سے انہیں حوصلہ افزائی ملتی ہے، جس سے خواتین اور ماؤں کو بااختیار بنانے اور معاشرے میں ان کا مقام بلند کرنے میں مدد ملے گی، جواماراتی معاشرے کی اقدار اورمرحوم شیخ زاید بن سلطان آل نھیان کی تعلیمات کے مطابق ہے.

ہارورڈ نے بین الاقوامی پناہ گزینوں کے بگڑتے ہوئے بحران کو نمایاں کیا اور کہا کہ پناہ گزینوں کا 50 فیصد خواتین پر مشتمل ہے، اور بہت سے معاملات میں وہ مشکل حالات میں اپنے خاندانوں کی دیکھ بھال کرتی ہیں، اور اقوام متحدہ کا ہائی کمشن ہر ایک سے یہ اپیل کر رہا ہے کہ ان کی مدد کی جائے.

http://wam.ae/en/details/1395302676533

WAM/MOHD AAMIR