• IMG_3416-31-07-18-05-54
  • IMG_3418-31-07-18-05-54
  • IMG_3417-31-07-18-05-54
  • IMG_3415-31-07-18-05-54

متحدہ عرب امارات کی جانب سے دی جانے والی امداد سے حديدہ کے التحيتا اورزبيد کے اضلاع میں 42,000 یمنی باشندوں کو فائدہ پہنچا

حدیدہ، 31 جولائی، 2018 (وام) -- متحدہ عرب امارات کی جانب سے حديدہ کے صوبے کے پڑوسی دیہات اورزبيد کے آزاد کرائے گئے علاقوں اور التحيتا ضلع کے رہائشیوں میں اماراتی ھلال احمر کے ذریعے فراہم کی جانے والی غذائی امداد سے تقریبا 42 ہزار یمنی باشندوں کو فائدہ پہنچاہے، جس میں 30 ہزار بچے اور 6 ہزار خواتین شامل ہیں.

یمن کے عوام کی مدد کے لئے امارات کی دانشمندانہ قیادت کی ہدایت یراماراتی ھلال احمر نے متحدہ امارات کی جاری انسانی ہمدردی کی مہمات کے حصہ کے طور پر ہنگامی امداد روانہ کی، جسمیں کھانے کے 6,000 پارسلز اور روزمرہ استعمال کی اشیاء بھی شامل تھیں.

یمن میں متحدہ عرب امارات کے انسانی ہمدردی کے آپریشنز کے ڈائریکٹر سعيد الكعبي نے کہا ہے کہ حدیدہ کے آزاد اور نیم آزاد علاقوں میں امداد کی ترسیل فوجی آپریشنز کے مطابق کی جارہی ہے تاکہ زیادہ سے زیادہ فوری امداد تقسیم کی جاسکے اور ایرانی حمایت یافتہ حوثی باغیوں کے محاصرے کے خاتمے کے بعد یمنی خاندانوں تک اس امداد کی رسائی کو یقینی بنایا جاسکے.

اس سے پہلے، ھلال احمر نے 10 اماراتی بحری جہازوں پر 35,000 ٹن خوراک فراہم کی، اس کے علاوہ ایک فضائی پل کے تحت سات پروازوں کے ذریعے 14,000 فوڈ پارسلز بھیجے، تنظیم نے 100 امدادی قافلے بھی روانہ کئے جس نے یمن کی مقامی مارکیٹوں سے سامان خرید کر مستحقین میں تقسیم کیا.

http://wam.ae/en/details/1395302701565

WAM/MOHD AAMIR

متعلقہ خبریں