• تقرير  / في 6 أغسطس زايد حاكماً لأبوظبي .. وولادة حلم "الاتحاد" . 1
  • تقرير  / في 6 أغسطس زايد حاكماً لأبوظبي .. وولادة حلم "الاتحاد" . 2
  • تقرير  / في 6 أغسطس زايد حاكماً لأبوظبي .. وولادة حلم "الاتحاد" . 3

متحدہ عرب امارات میں کل شیخ زاید کی ابوظہبی کا حکمران بننے کی 52 ویں سالگرہ کل جوش و خروش سے منائی جائے گی

ابوظہبی، 5 اگست، 2018 (وام) -- متحدہ عرب امارات میں کل 6 اگست کو بابائے قوم شیخ زاید بن سلطان آل نھیان کی ابوظہبی کا حکمران بننے کی 52 ویں سالگرہ جوش و خروش سے منائی جائے گی.

"زاید کے سال" کے موقع پر یہ دن خصوصیت اہمیت حاصل کر چکا ہے، اس تاریخ ساز دن کے بعد سے متحدہ عرب امارات کے ترقیاتی سفر کے خدوخال وضع ہوئے، اور اس کے کچھ عرصے کے بعد شیخ زاید کی قیادت میں 2 دسمبر 1971 کو اتحاد کی تشکیل عمل میں آئی جو ایک دانشمند اور روادار قیادت اور سفارتی مہارت کا نمونہ ثابت ہوئی.

شیخ زاید نےاتحاد اور استحکام کے حصول میں اپنے لوگوں کی خواہشات کو کامیابی سے پورا کیا، اور ان کی غیر معمولی قیادت کے نتیجے میں متحدہ عرب امارات نے اپنے ترقیاتی سفر میں بڑی کامیابیاں اپنے نام کیں.

زاید کے سال کے موقع اور نیشنل آرکائیو کے اشتراک سے امارات نیوز ایجنسی (وام) نے ایک ماہانہ سیریز کا آغاز کیا ہے جس میں مرحوم راہنما کی میراث کو نمایاں کیا گیا ہے.

عرب بھائی چارہ 6 اگست، 1966 میں شیخ زاید ابوظہبی کے حکمران بنے ، انہوں نے اس دور میں شدید علاقائی سیاسی بحران میں اپنے اثرو رسوخ کے ذریعے عرب ممالک کے درمیان روابط کو مضبوط کیا۔ انہوں نے تمام عرب ممالک کے ساتھ تعاون اور بات چیت کے رشتوں کو وسعت دینے کی ضرورت کو پہچانا اوراگست 1974 میں مغربی عرب کے ممالک جن میں تیونس، لیبیا اور مصر شامل ہیں کے تاریخ ساز دوروں سے ٹھوس سفارتی اور سیاسی روابط کی بنیاد ڈالی.

1976 میں سری لنکا کے دارالحکومت کولمبو میں غیروابستہ تحریک کے سربراہی اجلاس کے دوران شیخ زاید نے فلسطینی عوام اورایک ریاست کے قیام کے لئے انکے حق کی حمایت میں متحدہ عرب امارات کے ٹھوس موقف کی تصدیق کی.

متحدہ عرب امارات کی ترقی شیخ زاید نے ہمیشہ ملک کی ترقی کے عمل کو فروغ دینے پر زور دیا۔ متحدہ عرب امارات کے اداروں کو ترقی دینے کے لئے اگست کے مہینے میں قانون سازی کے حوالے سے کئی احکامات جاری کئے گئے، 1 اگست 1973 کو ایک فیصلہ کے ذریعےوفاقی سپریم کورٹ کا قیام عمل میں لایا گیا جو ملک میں اعلی ترین عدالتی ادارہ ہے.

مرحوم راہنما نے 5 اگست 1973 کو ایک امیری حکم نامہ کے ذریعے زاید بن سلطان آل نھیان چیئریٹی فاؤنڈیشن کی تشکیل کی، جومتحدہ عرب امارات اور بیرون ملک غریب افراد کی امداد کےلئے کام کررہی ہے.

بین الاقوامی تعاون 1 اگست 1990 ء کو شیخ زاید نے مصر میں سیاحت کو فروغ دینے کے لئے 188,000 رقبے کی بحالی اور ہوٹلوں کی تعمیر کے لئے فنڈز فراہم کئے، ایک سال بعد 3 اگست کو شیخ زاید نے مراکش، رباط میں شیخ زاید ہسپتال کا سنگ بنیاد رکھا.

انہوں نے 24 اگست 1997 کو اسلامی کانفرنس تنظیم اور اس کے اسلامی یکجہتی فنڈ کو 5 ملین ڈالر کا عطیہ دیا. دو دن کے بعد شیخ زاید نے فلسطینی عوام کی مدد اور اسرائیلی کی طرف سے نافذ اقتصادی محاصرے کا مقابلہ کرنے کے لئے 15 ملین ڈالر فراہم کئے.

شیخ زاید نے اگست 1999 میں ترکی میں زلزلے کے متاثرین کو فوری امداد فراہم کی. انہوں نے 2003 میں عراق میں6 ہسپتالوں کو اپنے خرچے پر طبی آلات اور سازوسامان خرید کردیا.

http://wam.ae/en/details/1395302702260

WAM/MOHD AAMIR

متعلقہ خبریں