انسانی سرمایہ امارات اور مصر کے موجودہ اور مستقبل کے منصوبوں میں مرکزی اہمیت کا حامل ہے، جواہر القاسمی

  • ط¬ظˆط§ظ‡ط± ط§ظ„ظ‚ط§ط³ظ…ظٹ: ظ…طµط± طھظ†ظ‡ط¶ ط¨ط·ط§ظ‚ط§طھ ط´ط¨ط§ط¨ظ‡ط§ ظˆظ…ط³طھظ‚ط¨ظ„ ط§ظ„ط¹ط±ط¨ ظ…ط±ظ‡ظˆظ† ط¨ظ…ط§ ظ†ط؛ط±ط³ظ‡ ط§ظ„ظٹظˆظ… ظپظٹ ط¹ظ‚ظˆظ„ ط£ط¨ظ†ط§ط¦ظ†ط§. 2
  • ط¬ظˆط§ظ‡ط± ط§ظ„ظ‚ط§ط³ظ…ظٹ: ظ…طµط± طھظ†ظ‡ط¶ ط¨ط·ط§ظ‚ط§طھ ط´ط¨ط§ط¨ظ‡ط§ ظˆظ…ط³طھظ‚ط¨ظ„ ط§ظ„ط¹ط±ط¨ ظ…ط±ظ‡ظˆظ† ط¨ظ…ط§ ظ†ط؛ط±ط³ظ‡ ط§ظ„ظٹظˆظ… ظپظٹ ط¹ظ‚ظˆظ„ ط£ط¨ظ†ط§ط¦ظ†ط§. 1

قاہرہ،9 فروری، 2019(وام)۔۔شارجہ کے حکمران کی اہلیہ عزت مآب شیخة جواہر بنت محمد القاسمی نے کہاہے کہ صدر عبدالفتاح السیسی کی قیادت میں مصر اپنے اداروں اور ہیومین کیپٹل کی ترقی کی جانب رواں دواں ہے۔ان خیالات کا اظہار شیخہ جواہر نے غزہ گورنریٹ کے سکستھ آف اکتوبر سٹی میں نوجوان قیادت کے قومی تربیتی ادارے کے دورہ کے موقع پر کیا۔جہاں ان کا استقبال مصر کے سابق وزیر ثقافت محمد صابر العرب اور اکیڈمی کی ایگزیکٹو ڈائریکٹرڈاکٹر رشا راغب نے کیا۔مصر کے سرکاری دورہ کے دوران شیخة جواہر نے صدر کی اہلیہ انتصار السیسی سے بھی ملاقات کی جس میں مصر اور شارجہ کے سماجی بھلائی کے اداروں کے درمیان تعلقات کو فروغ دینے پر بات چیت کی گئی۔اکیڈمی میں شیخہ جواہر نے اکیڈمی کے مختلف شعبوں کا دورہ کیا اور وہاں پڑھائے جانے والے کورسز بارے آگاہی حاصل کی انہوں نے ٹرینرز اور ملازمین سے ملاقات اور طلبا سے بھی گفتگو کی۔انہوں نے روبو قرن فاونڈیشن کے تجربات اورمستقبل کے رہنماوں کی تیاری کے حوالے سے اس کی کامیابیوں کا بھی ذکر کیا۔انہوں نے نوجوانوں کی تعلیم وتربیت اور صلاحیتوں میں اضافے کے لئے مشترکہ مقاصد پر خوشی کااظہار کیا۔اور کہا کہ بحیثیت ایک قوم کے ہم اپنے مقاصد کے حصول کے لئے متحد ہیں۔انہوں نے کہا کہ عرب دنیا کے مستقبل کا انحصار ان روایات پر ہے جو ہم اپنے بچوں کوودیعت کررہے ہیں۔روبو قرن میں ہم امارات کے نوجوانوں کو شہریت،تخلیقی،اختراعی اجتماعیت کی روایات کی تعلیم دیتے ہیں۔ تاکہ وہ قیادت کرنے کی ذمہ داریوں کو بہتر طور پر ادا کرسکیں۔انہوں نے کہا کہ ورلڈ یوتھ کانفرنس دوہزار سولہ میں مصری نوجوانوں کی سفارشات پر صدر السیسی کا مثبت ردعمل اس بات کا ثبوت ہے کہ ملک کی قیادت اپنے عوام کی توقعات پر پورا اتررہی ہے۔انسانی سرمایہ کی ترقی امارات اور مصر دونوں کے موجودہ اور مستقبل کے منصوبوں کی بنیاد ہے۔شیخة جواہر نے کہا کہ انہوں نے گزشتہ چند سالوں کے دوران صحت زراعت صنعت تجارت کے شعبوں میں مصر کی ترقی کو سراہا ہے۔اور اس میں کوئی شک نہیں کہ مصر کے طویل المدت منصوبوں سے سلامتی،استحکام اور خوشحالی کی منرل حاصل ہوگی۔یہ اقدامات اس بات کا ثبوت ہیں کہ مصر عرب اقوام کا مرکز اور ترقی کی ڈرائیونگ فورس ہے.

 

ترجمہ۔تنویرملک.

 

http://wam.ae/en/details/1395302738171

WAM/Ahlam Al Mazrooi