محمد بن زاید نے زرعی ٹیکنالوجی کی ترقی کے لئے ایک ارب درہم مالیت کے پیکیج کی منظوری دے دی

ابوظہبی، 11مارچ، 2019(وام)۔۔ ابوظہبی کے ولی عہد اور متحدہ عرب امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر عزت مآب شیخ محمد بن زاید آل نھیان نے ابوظہبی میں مقامی وبین الاقوامی زرعی ٹیکنالوجی اے جی ٹیک، کمپنیوں کے لئے ایک ارب درہم مالیت کے پیکیج کی منظوری دی ہے۔اس اعلان کا مقصد اے جی ٹیک ایکوسسٹم کی ترقی اور صحرائی ماحول میں زراعت کے شعبہ میں امارات کو ایک عالمی مرکز کی حیثیت دلاناہے.

ایگزیکٹو کمیٹی کے چیئرمین اور ابوظہبی ایگزیکٹو کونسل کے رکن عزت مآب شیخ خالد بن محمد بن زاید آل نھیان کا کہنا ہے کہ یہ اقدام مقامی زرعی ٹیکنالوجی کی کمپنیوں کی پیداوار میں اضافے اور سرکردہ انٹرنیشنل کمپنیوں کی امارات میں سرمایہ کاری کے لئے حوصلہ افزائی کے لئے شروع کیا گیا ہے۔ اس شعبہ کی ترقی کے نتیجہ میں نئے مواقع پیدا ہوں گے جن کے ملکی معیشت پر وسط مدتی اور طویل المدت اثرات مرتب ہوں گے.

ابوظہبی، ایگری ٹیک کمپنیوں کے لئے سرمایہ کاری کے یکساں مواقع فراہم کرتا ہے، جس سے وہ اپنی مصنوعات کو فروغ دے سکتی ہیں۔اس کے علاوہ ابوظہبی میں لاجسٹک کا بہترین شعبہ موجود ہے،ہمارے اردگرد کروڑوں صارفین کے ساتھ ہماری جغرافیائی حیثیت بھی لاتعداد مواقع پیش کرتی ہے.

ابوظہبی سرمایہ کاری آفس، اے ڈی آئی او، کی زیر قیادت یہ اقدام ابوظہبی حکومت کے تیزرفتارترقی کے پروگرام:غدان اکیس: کا حصہ ہے۔اسٹریٹیجک علوم کے ساتھ ایک جدید ایگری ٹیک شعبہ کا قیام غدان پروگرام کا ایک اہم جزو ہے جس کا مقصد ایک محفوظ اقتصادیات ہے۔ وسیع اراضی کی دستیابی اور قدرتی درجہ حرارت اور سورج کی روشنی کے ساتھ ابوظہبی کے موافق موسم اور ماحول کے ساتھ یہ پیکیج کمپنیوں کو تین ذیلی شعبوں کے لئے دیا جائے گا،جن میں وسیع رقبے پر کاشت کاری اورروبوٹکس زراعت،بائیو انرجی اور انڈور کاشت کاری شامل ہیں.

اے ڈی آئی او کی جانب سے شروع کئے جانے والے اس ایگری ٹیک پیکیج سے ناصرف ایک فعال ایگری ٹیک ایکو سسٹم قائم ہوگابلکہ جی ڈی پی میں پینتالیس کروڑ امریکی ڈالر کی شراکت داری کے ساتھ دوہزار اکیس تک متحدہ عرب امارات میں دوہزار نو سو ملازمتیں پیدا ہوں گی۔ان مراعات کے علاوہ ابوظہبی نے ایگری ٹیک کاروبار کے لئے متعدد فوائد بھی فراہم کئے ہیں جن میں عالمی معیار کے یکساں ٹیکس ریٹس، عالمی معیار کا انفراسٹرکچر، وسیع پیداوار کو سنبھالنے کی صلاحیت، توانائی کے سستے ذرائع اور ٹیرف کا مناسب سٹرکچر شامل میں.

غدان اکیس،پچاس ارب درہم مالیت کا ابوظہبی کی ترقی کو مہمیز دینے کا تین سالہ پروگرام ہے جس کی ابوظہبی کے ولی عہد اور امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر عزت مآب شیخ محمد بن زاید آل نھیان نے توثیق کی ہے.

ترجمہ۔تنویر ملک.

http://wam.ae/en/details/1395302746345

WAM/