اماراتی رمضان افطارمنصوبے سے لبنان میں دولاکھ افراد مستفید ہوئے


بیروت،6 جون، 2019 (وام) ۔۔ لبنان میں اماراتی رمضان افطار منصوبے سے دو لاکھ سے زائد لبنانی باشندوں اور شامی اور فلسطینی پناہ گزینوں نے استفادہ کیا.

 

رواداری کے سال کی مناسبت سے 1440 رمضان المبارک کے دوران یہ منصوبہ کئی امارتی فلاحی تنظیموں کی طرف سے شروع کیا گیا تھا.

 

رمضان المبارک منصوبے کی نگرانی متحدہ عرب امارات کے سفارتخانے میں انسانی اور ترقیاتی امور کے اتاشی نے کی۔ اس منصوبے کو زاید فلاحی اور انسانی ہمدری فاؤنڈیشن، خلیفہ بن زاید آل نھیان فاؤنڈیشن، محمد بن راشد آل مکتوم انسانی ہمدردی اور فلاحی تنظیم ، ہلال احمر امارات، شارجہ چیریٹی انٹرنیشنل، ہیومن اپیل انٹرنیشنل اور دار البر سوسائٹی کی حمایت حاصل تھی.

 

اس منصوبے کے تحت نہ صرف روزانہ بڑے پیمانے پر افطاریاں کرائی گئیں بلکہ یتیموں کی مدد کی گئی اور مستحق افراد میں کجھوریں، خوراک، فطرانہ اور عید کے کپڑے بھی تقسیم کئے گئے.

 

لبنان میں متحدہ عرب امارات کے سفیر حمد سعید الشمسی نے کہا ہے کہ اس منصوبے کا مقصد یتیموں، بیواوں، معذور افراد، غریب خاندانوں اور بزرگ افراد کی مدد کرنا ہے۔ انھوں نے کہا کہ اس منصوبے کے تحت لبنان کے تقریبا تمام شہروں اور گاوں میں لوگوں کی مدد کی گئی.

 

منصوبے سے مستفید ہونے والوں نے رمضان المبارک کے دوران لبنان میں انسانی ہمدردی کی بنیاد پر شروع کئے جانے والے منصوبوں پر متحدہ عرب امارات کا شکریہ ادا کیا.

 

ترجمہ:ر یاض خان .

 

http://www.wam.ae/en/details/1395302766602

WAM/Urdu