عبداللہ بن زاید کا خطے میں کشیدگی کم کرنے پر زور


نکوسیا،15 جون، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے خارجہ امور اور بین الاقوامی ترقی کے وزیر شیخ عبداللہ بن زاید آل نھیان نے کہا ہے کہ خطے کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر عالمی برادری کی طرف سے کشیدگی کم کرنے کیلئے کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے.

اپنے قبرصی ہم منصب Christodoulides Nikos کے ہمراہ نکوسیا میں پریس کانفرنس میں خطے خاص طور پر خلیج عرب، عمان اور یمن میں قبرص کی طرف سے اپنے ملک کے موقف کی حمایت پر شکریہ ادا کیا.

متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ نے کہا کہ انھوں نے اپنے پانیوں میں ہونے والے حملوں کے حوالے سے ثبوت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں پیش کردئیے ہیں۔ شیخ عبداللہ نے کہا کہ انھوں نے یہ کام بہت تکنیکی انداز میں ذمے داری اور شفاف طریقے سے کیا ہے اور اپنے دوستوں، اتحادیوں اور شراکت داروں کو دعوت دی ہے کہ اس کو دیکھیں۔ انھوں نے کہا کہ یہ حملے ریاستی حمایت کے بغیر ممکن نہیں ہیں اور وہ امید رکھتے ہیں کہ اپنے دوستوں اور شراکت داروں کے ساتھ مل کر ایسے حمل روک سکتے ہیں.

شیخ عبداللہ نے کہا کہ ہمیں آپ جیسے دوستوں اور شراکت داروں کی ضرورت ہے جو آپ کی طرح سمجھتے ہوں کہ اس خطے کیلئے ایسی منصوبہ بندی کی ضرورت ہے جس کے تحت خطے کے تمام رکن ملک آئیں.

قبرص کے ساتھ تعلقات کو فروغ دینے کے لئے متحدہ عرب امارات کے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے شیخ عبداللہ نے کہا کہ انھیں امید ہے کہ قبرص جیسے دوستوں اور شراکت داروں کے ساتھ وہ چیلنجوں پر قابو پا سکتے ہیں.

مسئلہ فلسطین کے حوالے سے اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے متحدہ عرب امارات کے وزیر خارجہ نے کہا کہ انکے ملک نے فلسطینیوں اور اسرائیلیوں کے درمیان امن عمل پر گہری نظر رکھی ہوئی ہے۔ انھوں نے کہا کہ خطے میں پائیدار اور مستحکم امن کیلئے امن معاملے کو آگے بڑھانے کی ضروت ہے .

قبرص کے وزیر خارجہ نے کہا کہ انتہا پسندی اور موسمیاتی تبدیلی جیسے چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے دونوں ملکوں کے موقف میں یکسانیت ہے.

خلیج عرب میں تجارتی بحری جہازوں پر حالیہ حملوں کی مذمت کرتے ہوئے انھوں نے کہاکہ قبرص متحدہ عرب امارات اور خطے میں اپنے شراکت داروں کے ساتھ مل کر دہشتگردی کے ان حملوں کی مذمت کرتاہے.

قبرص کے وزیر خارجہ نے کہا کہ ملاقات میں دونوں ممالک کے درمیان دو طرفہ تعلقات کو فروغ دینے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس موقع پر دونوں ملکوں کے درمیان مشترکہ تعاون کمیٹی قائم کرنے کیلئے مفاہمت کی یاداشت اور اقتصادی معاہدے پر دستخط کئے گئے.

انہوں نے شیخ عبداللہ اور ان کے وفد کے اعزاز میں ظہرانہ دیا.

ترجمہ: ریاض خان .

http://wam.ae/en/details/1395302767974

WAM/Urdu