سہولتیں مہیا ہوں تو عرب امارات میں بائیسکل پر کام پر جانے والوں کی تعداد دوگنا ہوسکتی ہے،ڈچ موسمیاتی سفیر


بنسال عبدالقادر سے ابوظہبی، 3جولائی، 2019 (وام) ۔۔ابوظہبی کے شدید گرم موسم میں منگل کی صبح ایک گھنٹہ سے ز ائد سائیکل چلانے والے ہالینڈ کے موسمیاتی سفیر نے کہا ہے کہ آجروں کی جانب سے حمایت اور سہولتوں کی دستیابی کی صورت میں متحدہ عرب امارات میں لوگ گرمیوں کے دوران بھی سائیکل پر کام پر جاسکتے ہیں.

 

سفیر برائے موسم مارسل بیوک بوم، ٹریفک کے مسائل سے لے کر موسمیاتی تبدیلیوں سے جڑے مسائل کے حل کے لئے، سفر کے صحت مند ذریعے کے لئے سائیکلنگ کو فروغ دے رہے ہیں.

 

بیوک بوم نے کہا کہ وہ پائیداریت سے متعلق گفتگو نہیں کررہے؛ لیکن غالباً وہ ایک جگہ سے دوسری جگہ جانے کے سب سے موزوں طریقہ سائیکلنگ کے استعمال کی بات کرتے ہیں.

 

مصدر سٹی میں اماراتی خبر ایجنسی وام سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے بتایاکہ" گزشتہ صبح میں الحدیریات کے سائیکل ٹریک پر گیا اور خود سائکل چلائی"

اس نے اپنے ساتھی ڈچ موسمیاتی مہم ٹیم کے پالیسی افسر ووٹر وارم گور کے ہمراہ سواگھنٹہ میں چالیس کلومیٹر تک سائیکل پر سفر کیا۔انہوں نے ابوظہبی کی معروف بائیک شاپ یاس سائیکل سے بائیکس کرائے پر حاصل کیں اور صبح سوا چھ بجے نکل پڑے بیوک بوم نے بتایا کہ"[ درجہ حرارت میں اضافے کی وجہ سے] انہیں ساڑھے سات بجے رکنا پڑا لیکن ذرا سوچیں ایسے موسمی حالات میں بھی اگر آپ کو سات بجے صبح تک کام کرنا پڑے تو آدھے گھنٹہ کے لئے سائیکل کیوں نہیں چلاسکتے[ کام پر جانے کے لئے]؟ یہاں آپ کو اپنے آجر کی مددکی ضرورت ہے.

 

انہوں نے تجویز پیش کی کہ موسم گرما کے دوران سائیکل چلانے کے لئے سٹاف کی حوصلہ افزائی کے لئے آجر کو کام کی جگہ پر نہانے اور ڈریسنگ رومز کی سہولت فراہم کرنا چاہیئے۔" اس طرح ان کے ورکرز بھی صحت مند اور فٹ رہیں گے".

 

تاہم ان کا خیال ہے کہ عرب امارات کے شدید گرم موسم میں سائیکلنگ صرف صبح اور شام کے اوقات میں ہی ممکن ہے.

 

ابوظہبی موسمیاتی اجلاس میں شرکت کی غرض سے دارالحکومت میں موجود موسمیاتی سفیر نے کہا کہ" عرب امارات میں جون یا جولائی کے مہینوں میں دوپہر کے اوقات میں شائد بائیسکل پر بیٹھنا ممکن نہ ہو".

 

انہوں نے کہا کہ وہ دنیا میں سائیکلنگ کی مقبولیت سے مطمئن نہیں ہیں تاہم ان کے اپنے ملک میں یہ بہت مقبول سواری ہے.

 

سائیکلنگ فیکٹس دوہزار اٹھارہ کے مطابق ہالینڈ میں بائیسکل کی تعداد[ تئیس ملین] وہاں کے عوام کی تعداد[سترہ ملین] سے زیادہ ہے.

 

بیوک بوم نے کہا کہ" ہالینڈ میں لوگ بائیسکل پر پیدا ہوتے ہیں!ہمارے ملک میں بائیسکل کی تعداد لوگوں کی تعداد سے زیادہ ہے۔ہم ہر چیز کے لئے بائیسکل استعمال کرتے ہیں اور بہتر کرسکتے ہیں".

 

بیوک بوم عرب امارات کی کونسل برائے موسمیاتی وماحولیاتی تبدیلی کے بھی رکن ہیں.

 

انہوں نے عرب امارات کے موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے اقدامات کو سراہا اور کہا کہ عرب امارات اور ہالینڈ میں کئی ایک چیزیں مشترک ہیں.

 

پیرس معاہدے کے حوالے سے بحیثیت موسمیاتی سفیر کے انہوں نے کہا کہ اس کے ہوتے ہوئے موجودہ وقت میں کسی نئے معاہدے کی ضرورت نہیں ہے "آپ کو دو چیزوں میں تفریق کرنے کی ضرورت ہے : پہلا یہ کہ ، اس معاہدے کا مقصد درجہ حرارت کو ڈیڑھ درجے سینٹی گریڈ سے تجاوز نہ ہونے دینا ہے دوسرا یہ کہ ہمیں موسمیاتی تبدیلیوں سے خود کو ہم آہنگ کرنا ہوگا اور لازمی طور پر اس کے لئے وسائل درکار ہیں".

 

ترجمہ۔تنویر ملک.

 

http://wam.ae/en/details/1395302771916

WAM/Urdu