عرب امارات کی روس میں عالمی مینوفیکچرنگ و انڈسٹریلائزیشن سربراہ اجلاس میں شرکت


دبئی، 8جولائی، 2019 (وام) ۔۔عالمی مینوفیکچرنگ و انڈسٹریلائزیشن کادوسرا سربراہی اجلاس،جی ایم آئی ایس، متحدہ عرب امارات کی شرکت کے ساتھ روس کے شہر یکاترنبرگ میں شروع ہوگیا ہے.

 

وزیر توانائی وصنعت سھیل بن محمد فرج فارس المزروعی کی قیادت میں عرب امارات کے وفد میں وزیر تعلیم حسین بن ابراھیم الحمادی ابوظہبی ایگزیکٹو امور اتھارٹی کے چیئرمین خلدون خلیفہ المبارک اور ابوظہبی محکمہ معاشی ترقی کے چیئرمین سیف محمد الھاجری سمیت دیگر حکام شامل ہیں.

 

تین روز تک جاری رہنے والے عالمی مینوفیکچرنگ و انڈسٹریلائزیشن اجلاس، دوہزار دس سے روس میں ہونے والے سالانہ صنعتی وتجارتی میلے، انوپروم کے ساتھ ہورہا ہے۔ایک صنعتی ایسوسی ایشن کے طور پر جی ایم آئی ایس کا قیام دوہزار پندرہ میں عمل میںلایا گیا تھا جس کا مقصد تیارکنندگان،حکومتوں،غیر سرکاری تنظیموں،ٹیکنالوجسٹ اور سرمایہ کاروں کے درمیان تعلقات قائم کرنا تھا.

 

سربراہی اجلاس ایک ایساپلیٹ فارم ہے جو مینوفیکچرنگ سیکٹر کو عالمی پیداوار اور ہر ایک کے فائدہ کے لئے کی شراکت کے مواقع مہیاکرتا ہے۔ 2019 سربراہی اجلاس عالمی سطح پر مینوفیکچررز کے شعبے کے بارے میں علم، بہترین طریقوں اور معیار کے ذریعے چوتھے صنعتی انقلاب کی ٹیکنالوجیز کے اثر ات کو مربوط کرے گا.

 

ترجمہ۔ تنویر ملک.

 

http://wam.ae/en/details/1395302772998

WAM/Urdu