خصوصی افراد نے متحدہ عرب امارات کے سرکاری سکولوں کی یونیفارم تیار کیں


ابوظبی، 16 جولائی، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے سرکاری سکولوں کے ہزاروں بچوں کیلئے یونیفارم سینے کیلئے مضبوط ارادے اور مہارت کی ضرورت ہے اور آپ کو یہ جان کر خوشی ہوگی کہ خصوصی افراد نے یہ کام کرکے دکھا دیا ہے.

زاید ہائیرآرگنائزیشن، ZHO کے سلائی پروگرام کے تحت معذور نوجوان افراد کو متحدہ عرب امارات کی افرادی قوت میں شامل ہونے کا موقع فراہم کیا گیا ہے تاکہ وہ بھی ملک کی ترقی کے سفر میں حصہ لے سکیں.

متحدہ عرب امارات کی تعلیم اور کیمونٹی ڈیولپمنٹ کی وزارتوں کے ساتھ کئے جانے والے معاہدے کے تحت اس بات کو یقینی بنایا گیا ہے کہ سرکاری اسکولوں کو یونیفارم فراہم کرنے والی نجی کمپنیاں سلائی کے کام کا کم از کم ایک فیصد ZHO کی سلائی ورکشاپس کو دیں گی جہاں خصوصی افراد کام کررہے ہیں.

اس پروگرام کے تحت تقریبا 100 خصوصی افراد کو یونیفارم سینے کی تربیت دی گئی ہے۔ ان یونیفارم کو ایک خصوصی ٹریڈ مارک علامت (لوگو) دیا گیا ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہ یونیفارم خصوصی افراد نے تیار کیا ہے.

ابو ظبی میں زاید ایگریکلچرل اینڈ ووکیشنل سنٹر کے ڈائریکٹر محمد سیف العارفی نے امارات نیوز ایجنسی، وام سے گفتگو کرتے ہوئےبتایا کہ متحدہ عرب امارات کی حکومت نے معذور افراد کے تمام شعبوں میں انضمام کو یقینی بنا کر انھیں بااختیار بنانے کا عزم کررکھا ہے.

انہوں نے کہا کہ ZHO شیخ خالد بن زاید آل نھیان کی قیادت میں تعلیم، مشاورت، ووکیشنل تربیت اور کھیلوں کی سرگرمیوں کے ذریعےمعاشرے میں خصوصی افراد کی زیادہ سے زیادہ شمولیت کو یقینی بنا رہی ہے.

زاید ہائرآرگنائزیشن، ZHO کا قیام 2004 میں عمل میں آیا تھا ۔ اسوقت اس تنظیم کے تحت 25 مراکز معذور افراد کی معاشرے میں زیادہ سے زیادہ شمولیت کویقینی بنانے کیلئے کام کررہے ہیں .

ریاض خان .

http://wam.ae/en/details/1395302774336

WAM/Urdu