متحدہ عرب امارات کا عدن میں مسلح محاذ آرائی پر گہری تشویش کا اظہار


ابو ظہبی، 10 اگست، 2019 ( وام ) ۔۔ متحدہ عرب امارات نے عدن میں مسلح تصادم کے تسلسل پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اور یمنی شہریوں کی سلامتی اور تحفظ کو برقرار رکھتے ہوئے امن کے قیام اور تناو میں کمی پر زور دیا ہے.

 

امور خارجہ وبین الاقوامی تعاون کے وزیر عزت مآب شیخ عبداللہ بن زاید آل نھیان نے تمام فریقین سے جاری کوششوں کی مددکرنے اور حوثی باغی ملیشیا اور دیگر دہشت گرد گروہوں کا مقابلہ کرنے اور ان کے خاتمے کی ضرورت پر زور دیا ہے.

 

شیخ عبداللہ نے سلامتی اور استحکام کو برقرار رکھتے ہوئے اس نازک مرحلے میں اختلافات کو ختم کرنے اور اتحاد کے لئے کام کرنے کے لئے ذمہ دار انہ اور سنجیدہ مزاکرات کا مطالبہ کیا.

 

انہوں نے اس بات پر بھی زور دیا کہ عرب امارات ، سعودی زیرقیادت عرب اتحاد میں ایک فعال شراکت دار کی حیثیت سے ، عدن کی صورتحال کو معمول پر لانے اور کشیدگی کے خاتمے کے لئے تمام تر کوششیں کررہا ہے اور حوثی بغاوت اور اس کی برگزشت کے خلاف کوششوں کو مجتمع کرنے پر زور دے رہا ہے.

 

انہوں نے مزید کہا کہ اس مشکل صورتحال کی وجہ سے ، مارٹن گریفتھس ، اقوام متحدہ اور یمن کے لئے اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے کے لئے ، یہ ضروری ہے کہ وہ عدن میں کشیدگی کے خاتمے کے لئے ہر ممکن کوشش کریں کیونکہ اقوام متحدہ کی کوششیں دباو میں ہیں، جو سیاسی ذریعے ، بات چیت اور گفت و شنید کے ذریعے استحکام اور سلامتی کے حصول کے لئے کوشاں ہے.

 

ترجمہ۔تنویر ملک.

 

http://wam.ae/en/details/1395302779749

WAM/Urdu