دیوا کا حتا میں ایک ارب چالیس کروڑ درہم لاگت سے پن بجلی ا سٹیشن کی تعمیر کا معاہدہ


دبئی ، 17 اگست ، 2019 (وام) ۔۔ دبئی بجلی وواٹر اتھارٹی ، دیوا نے اسٹرا بگ دبئی ایل ایل سی ، اسٹرا بگ اے جی ، آنڈرز ہائیڈرو اور اوزکر پر مشتمل کنسورشیم سے حتامیں ایک ارب تینتالیس کروڑ ستر لاکھ درہم کی لاگت سے پمپڈ اسٹوریج پن بجلی گھر کی تعمیر کامعاہدہ کیا ہے.

یہ حتا کے جامع ترقیاتی منصوبے کا حصہ ہے جسے نائب صدر، وزیر اعظم اور دبئی کے حکمران عزت مآب شیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے شروع کیا ہے.

یہ خلیج عرب میں اپنی نوعیت کا پہلا منصوبہ ہے جس سے دوسوپچاس میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی۔ توقع ہے کہ یہ منصوبہ اسی سال تک جاری رہے گا جوفروری دوہزار چوبیس تک پیداوارشروع کردے گا۔ای ڈی ایف کو اس پروجیکٹ کے لئے مشیر مقرر کیا گیا ہے.

اسٹریٹیجک اہمیت کا حامل یہ منصوبہ حتا کی معاشی ، معاشرتی اور ماحولیاتی ترقی میں مدد دے گا۔ یہ دبئی کے صاف توانائی دوہزار پچاس کے اہداف کو بھی حاصل کرے گا جس کے تحت دوہزار پچاس تک دبئی کی کل بجلی کی پچھہترفیصد پیداوار کو صاف توانائی سے حاصل کیا جانا ہے۔دیواا متحدہ عرب امارات کے شہریوں کو حتا کے اس جامع ترقیاتی منصوبے کے ذریعے روزگار کے جدید مواقع فراہم کرے گا۔ ان میں وزٹر سنٹر میں مقامات ، اور اس منصوبے سے وابستہ دیگر بیرونی سرگرمیاں اور سیاحتی سہولیات شامل ہیں.

دیوا کے ایم ڈی اورسی ای او سعید محمد الطایر نے کہا کہ ایک ارب تینتالیس کروڑ ستر لاکھ درہم کی لاگت سے تعمیر ہونے والا پمپ اسٹوریج پن بجلی گھر منصوبہ ہماری کوششوں ، اقدامات اور شیخ محمد بن راشد کے وژن کو حاصل کرنے کے منصوبوں کا ایک حصہ ہے۔ دیوا کی حکمت عملی پائیدار ، خوشگوار مستقبل کو یقینی بنانے او ہر چیز میں سر فہرست آنے کے عرب امارات کے مقصد، عرب امارات صد سالہ دوہزار اکہتر، عرب امارات ویژ ن دوہزار اکیس اور دبئی پلان دوہزار اکیس کی حمایت کرتی ہے.

ہائیڈرو الیکٹرک پاور اسٹیشن، حتا ڈیم کے پانی کا استعمال کرے گا ، جسے پہاڑ پر بنائے جانے والے ایک بالائی ذخیرہ میں محفوظ کیا جائے ۔ محمد بن راشد آل مکتوم شمسی پارک سے صاف اور سستی شمسی توانائی سے چلنے والی ٹربائن سے ڈیم سے بالائی ذخیرہ تک پانی پمپ کیا جائے گا۔ حسب ضرورت بالائی ذخائر سے گرنے والے پانی سے ٹربائنوں کے ذریعے بجلی پیدا کی جائے گی۔ بجلی کی طلب کے موجب نوے سیکنڈ کے اندر بجلی کی پیداوار اور اسٹوریج سائیکل کی کارکردگی اسی فیصد تک پہنچ جائے گی.

ترجمہ۔تنویر ملک.

http://www.wam.ae/en/details/1395302780304

WAM/Urdu