ایکسکلوسیو : ایستونیا کی صدر کا عرب امارات سے مل کر دیگر ممالک میں ڈیجیٹل انقلاب لانے کا اظہار


ابوظہبی ، 10 ستمبر ، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات اور ایستونیا باہمی تعاون سے ڈیجیٹل انقلاب کے دور میں داخل ہوسکتے ہیں ۔ یہ بات ایستونیا کی صدر کیرستی کالجلید نے امارات نیوز ایجنسی وام کو خصوصی انٹرویو میں کہی – ایستونیا کی صدر ان دنوں اپنے ملک کے کاروباری وفد کے ہمراہ عرب امارات کے دورے پر 24ویں عالمی توانائی کانگریس میں شرکت کیلئے ابوظہبی آئی ہوئی ہیں – انہوں نے ڈیجیٹل ٹیکنالوجی میں بہت پیچھے افریقی ممالک کا حوالہ دیتے ہوئے کہاکہ عرب امارات اور ایستونیا اس تناظر میں ترقیاتی امداد کیلئے باہمی تعاون کرسکتے ہیں ۔ دونوں ممالک میں تجارتی تعلقات اور سرمایہ کاری مواقع سے متعلق اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ وہ بزنس ٹو بزنس انویسٹمنٹ کی حوصلہ افزائی کرنا چاہتی ہیں ، انکا کہنا تھاکہ ایستونیا نے حال ہی میں دبئی میں اپنا نمائیندہ تجارتی دفتر بھی کھولا ہے – انہوں نے بتایاکہ ابوظہبی مین جلد ہی ایستونیا کا نیا سفارتخانہ کھولا جائے گا جبکہ انکا ملک ایکسپو 2020 دبئی مین بھرپور شرکت بھی کرے گا ۔ انہوں نے کہاکہ دونوں ممالک کی حکومتی تجارتی تعاون کے فروغ میں کردار ادا کرسکتی ہیں تاہم ایستونیا کا حقیقی تاثر یہ ہے کہ وہ کھلی اور آزاد مارکیٹ پر انحصار کرتا ہے ۔ عرب امارات کی وزارت معشیت کے اعدادوشمار کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان 2018ء میں غیر تیل تجارت کا حجم 8ء75 ملین ڈالر – انہوں نے کہاکہ ایستونیا کو ای گورننس میں قابل قدر مہارت اور صلاحیت حاصل ہے ، انکے ملک میں 99 فیصد حکومتی خدمات آن لائن فراہم کی جاتی ہیں ، تمام سروسز محکمت ڈیجیٹل آئی ڈی کے ذریعے محفوظ بنائے گئے ہیں ، ایستونیا کو امریکی ٹیکنالوجی کے میگزین "وائرڈ " نے 2017ء میں دنیا کی جدید ترین ڈیجیٹل سوسائٹی قرار دیا تھا ، ایستونیا میں ہر شہری کو ڈیجیٹل آئی ڈی کارڈ ملا ہوا ہے جو وہ بنکنگ ، ٹیکسز ادائیگی ، صحت شعبے کیلئے استعمال کرسکتا ہے – بلاک چین جیسی تخریبی ٹیکنالوجی سے لاحق خطرات کے بارے میں اظہار خیال کرتے ہوئے ایستونیا کی صدر نے کہاکہ انکی حکومت کی لیس سگنیچر کے ایس آئی پر مبنی ڈھانچہ استعمال کرتی ہے جو کہ مکمل محفوظ ہونے کیلئے مکمل آزمودہ ہے ، اس میں ڈیٹا کی سو فیصد پرائیویسی یقینی بنائی جاتی ہے ۔ انہوں نے ڈیٹا ساکھ کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئےکہاکہ ایسے مکمل بااعتماد ذریعے سے منتقل کیا جانا ضروری ہے – انہوں نے کہاکہ ایستونیا ایک ایسا معاشرہ ہے جہاں محفوظ ایکو نظام ، محفوظ خدمات فراہم کی جاتی ہیں اور اسکی حقیقی ضمانت فراہم کی جاتی ہے – Image credit: www.president.ee http://wam.ae/en/details/1395302785467

WAM/Urdu