الزیودی او آئی ای کی 15 ویں کانفرنس میں شرکت  کرینگے


ابوظبی، 7 نومبر ، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے موسمیاتی تبدیلی اور ماحولیات کے وزیر ڈاکٹر ثانی بن احمد الزیودی اگلے ہفتے ابوظبی میں جانوروں کی صحت کی عالمی تنظیم ، او آئی ای کے علاقائی کمیشن برائے مشرق وسطی کی 15 ویں کانفرنس کے آغاز میں شرکت کریں گے۔ وزارت موسمیاتی تبدیلی اور ماحولیات کے زیر اہتمام اور او آئی ای اور ابو ظبی زراعت اور فوڈ سیفٹی اتھارٹی کے تعاون سے یہ کانفرنس 10 سے 14 نومبر 2019 تک ہوگی۔ کانفرنس میں جانوروں کی صحت اور مویشیوں کے 80 سے زائد ماہرین، OIE کے مشرق وسطی کے دفاتر کے نمائندے اور زرعی اور جانوروں کی کھیتی کے شعبوں کے اسٹیک ہولڈرز سمیت عرب تنظیم برائے زرعی ترقی کے ارکان شرکت کریں گے۔ رواں ماہ ابوظبی میں او آئی ای کی ذیلی علاقائی نمائندگی کے قیام کے سلسلے میں کانفرنس میں متحدہ عرب امارات میں جانوروں کی صحت اور بہبود، اقوام متحدہ کے پائیدار ترقیاتی اہداف کی حمایت میں OIE کے کردار پر معلوماتی ورکشاپس اور پریزنٹیشنز کا ایک سلسلہ پیش کیا جائے گا۔ موسمیاتی تبدیلی اور ماحولیات کے ریجنز سیکٹر کے اسسٹنٹ انڈر سکریٹری سلطان علوان نے کہاکہ متحدہ عرب امارات ماحولیات اور اس سے متعلقہ مضامین سمیت کلیدی شعبوں میں بڑے بین الاقوامی ایونٹس کے لئے ایک پسندیدہ میزبان ملک بن کر ابھرا ہے۔ انھوں نے کہا کہ او آئی ای کی طرف سے میزبانی کے لئے متحدہ عرب امارات کا انتخاب جانوروں کی صحت اور فلاح و بہبود کے شعبے میں علاقائی طور پر متحدہ عرب امارات کی قیادت کو تسلیم کرنا ہے۔ انھوں نے کہا کہ متحدہ عرب امارات جانوروں کی صحت کے معاملے کو ترجیح دیتا ہے۔ حالیہ برسوں میں متحدہ عرب امارات نے مویشیوں کی نشوونما اور حفاظت اور جدید اور بین الاقوامی معیار کے مطابق جانوروں کی عام اور متعدی بیماریوں سے پیدا ہونے والے خطرات کو کم کرنے کی کوششیں تیز کردی ہیں۔ انھوں نے کہا کہ ہم اس شعبے کی بہتری کیلئے میکانزم کی تشکیل جاری رکھیں گے۔ کانفرنس کے نتائج اور سفارشات مئی 2020 میں پیرس میں ہونے والے 88 ویں او آئی ای جنرل اجلاس میں پیش کی جائیں گی۔ ابو ظبی زراعت اور فوڈ سیفٹی اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل سعید البحری سالم العمیری نے کہا کہ ہم اس شعبے میں بین الاقوامی معیار کے نفاذ کو آگے بڑھانے کے لئے او آئی ای اور ایم او سی سی ای ای کے ساتھ ہم آہنگی کو مستحکم کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ ہم جانوروں کی بیماریوں کے علاج اور ان پر قابو پانے کے لئے ویٹرنری لیبارٹریز خاص طور پر بین السرحدی بیماریوں اور پورے بورڈ میں جانوروں کی فلاح و بہبود کے طریقوں کو فروغ دینے کے لئے قومی اور علاقائی سطح پر تیز رفتار کوششوں کے منتظر ہیں۔ ترجمہ: ریاض برکی ۔ https://wam.ae/en/details/1395302800952

WAM/Urdu