متحدہ عرب امارات اور سینیگال کے درمیان تجارت 9.1ارب درہم ہوگئی


ابوظبی، 5 فروری، 2020 (وام) ۔۔ وفاقی مسابقتی اور شماریات اتھارٹی اور وزارت معیشت کے اعدادوشمار کے مطابق متحدہ عرب امارات اور سینیگال کے مابین تجارتی اور معاشی تعلقات میں حالیہ دنوں اہم پیشرفت دیکھنے میں آئی ہے اور 2014 سے 2018 تک دوطرفہ تجارت کی مالیت 9.1 ارب درہم ہوگئی ہے۔ توقع ہے کہ سینیگال کے صدر میکی سال کے سرکاری دورے سے دونوں ممالک کے مابین تجارتی اور معاشی تعلقات کو تقویت ملے گی اور باہمی تجارت میں مزید اضافہ ہوگا۔ متحدہ عرب امارات اور سینیگال نے "مشترکہ اماراتی۔سینیگالی کمیٹی" تشکیل دے کر اپنے تعلقات کو فروغ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ کمیٹی کے حالیہ دنوں میں متعدد اجلاس ہوئے جس سے دونوں ملکوں کے سرکاری اور نجی شعبوں کے مابین تعاون کو تقویت ملی ہے۔ سرکاری اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ دونوں ممالک کے مابین 2014 میں مجموعی باہمی تجارت 1.656 ارب درہم تھی ۔ ایف سی ایس اے کے اعدادوشمار کے مطابق 2016 میں یہ تجارت 1.4 ارب درہم تھی جو 2017 میں بڑھ کر 2.29 ارب درہم ہوگئی۔ دوطرفہ میں اضافہ جاری رہا اور 2018 میں یہ ارب درہم تک پہنچ گئی۔ اعدادوشمار یہ بھی ظاہر کرتے ہیں کہ متحدہ عرب امارات سے سینیگال کو دوبارہ برآمدات 4.9 ارب درہم کے قریب تھیں جو اس مدت کے دوران کل تجارت کا 53.8 فیصد ہیں۔ دونوں ممالک کے مابین مجموعی تجارت کا تقریبا 2.9 ارب درہم یا 31.8 فیصد درآمدات جبکہ برآمدات 1.3 ارب درہم یا 14.4 فیصد کے لگ بھگ ہیں۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://wam.ae/en/details/1395302821496

WAM/Urdu