ابوظبی ماحولیاتی ایجنسی اردن کےوائلڈ لائف ریزرو میں عرب نسل کی 60گائے چھوڑے گی

  • abu dhabi's environment agency to release 60 arabian oryx in jordan's shumari wildlife reserve 1
  • abu dhabi's environment agency to release 60 arabian oryx in jordan's shumari wildlife reserve 2
  • abu dhabi's environment agency to release 60 arabian oryx in jordan's shumari wildlife reserve 3

ابوظبی، 12 فروری، 2020 (وام) ۔۔ ابوظبی کی ماحولیاتی ایجنسی، EAD اور رائل سوسائٹی برائے تحفظ فطرت، RSCN نے مفاہمت کی ایک یادداشت پر دستخط کیے ہیں جس کے تحت دونوں تنظیمیں اردن میں شماری وائلڈ لائف ریزرو میں عرب نسل کی گائے کی افزائش کے منصوبوں پر ایک ساتھ کام کریں گی ۔ اس منصوبے کا انتظام EAD کے ذریعہ کیا جائے گا اور اس کا اطلاق RSCN کرے گی جس کا مقصد شماری وائلڈ لائف ریزرو میں اگلے دو سال میں 60 عربی نسل کی گائے چھوڑنا ہے۔ توقع ہے کہ اس منصوبے سے 68 گائے کے موجودہ ریوڑ کے جینیاتی ڈھانچے میں بہتری آئے گی۔ منصوبے کے تحت شماری وائلڈ لائف ریزرو کا احاطہ بھی بڑھایا جائے گا تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جاسکے کہ عربی گائے کے چرنے کے لئے مناسب جگہیں موجود ہیں۔ مفاہمت نامہ پر دستخط ابو ظبی میں دسویں عالمی اربن فورم کے موقع پر ہوا۔ ابوظبی کی ماحولیاتی ایجنسی، EAD کی طرف سے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر شیخہ سالم الدھری اور اور رائل سوسائٹی برائے تحفظ فطرت، RSCN کی جانب سے ادارے کے ڈائریکٹر جنرل یحییٰ خالد نے دستخط کیے۔ یہ منصوبہ شیخ محمد بن زاید عربین اورئینکس ری انٹروڈکشن پروگرام کا ایک حصہ ہے جو 2007 میں شروع کیا گیا تھا اور اس کا مقصد ایسے بڑے محفوظ ٹھکانے فراہم کرنا ہے جن میں عربی نسل کی گائیں قدرتی رہائش گاہ میں آزادانہ طور پر گھوم پھر سکیں۔ ڈاکٹر شیخہ الدھری نے کہا کہ شیخ محمد بن زاید عربی اوریکس ری انٹروڈکشن پروگرام اس خطے میں فطرت کی بحالی کے ابوظبی کے وژن کا ایک حصہ ہے۔ اس پروگرام نے گذشتہ برسوں کے دوران عربی نسل کی گائے کی تعداد کو بڑھانے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ 2007 میں اس پروگرام کے آغاز کے بعد سے ہم نے بڑے پیمانے پر افزائش نسل کے پروگرام شروع کیے ہیں اور اب تک متحدہ عرب امارات، عمان اور اردن میں ایک ہزار سے زیادہ عربی نسل کی گائے محفوظ چراہ گاہوں میں چھوڑی جاچکی ہیں۔ یحیٰ خالد نے کہا کہ یہ منصوبہ شماری وائلڈ لائف ریزرو میں عربی گائے کے ریوڑ کے جینیاتی موجودگی کو متنوع بنانے میں بہت معاون ثابت ہوگا۔ انھوں نے کہا کہ اس چراہ گاہ نے اس قسم کے پروگراموں میں ہمیشہ اہم کردار ادا کیا ہے اور ہم علاقائی اور عالمی سطح پر قدرتی ماحول کے تحفظ کی کوششوں میں متحدہ عرب امارات اور ابو ظبی کے تعاون کی قدر کرتے ہیں۔ ابوظبی کی ماحولیاتی ایجنسی، EAD اور رائل سوسائٹی برائے تحفظ فطرت، RSCN سیاحوں اور اسکول کے طلباء کو عربی نسل کے گائے کے تحفظ کے اقدامات کے بارے میں مزید معلومات حاصل کرنے میں مدد کے لئے ایک تعلیمی مرکز اور نصاب تیار کریں گے۔ کلب، ماحولیاتی کیمپ اور دیگرتقریبات جیسی سرگرمیاں جن میں مقامی لوگوں کو ان پروگراموں کے مختلف مراحل میں شامل کیا جاتا ہے سے آگاہی میں مزید اضافہ ہوگا۔ اردن کے ازرق نامی قصبے کے قریب واقع شماری وائلڈ لائف ریزرو دارالحکومت عمان سے 120 کلومیٹر مشرق میں واقع ہے۔ یہ ریزرو رائل سوسائٹی فار کنزرویشن آف نیچر اور ورلڈ وائلڈ لائف فنڈ کے تعاون سے 1975 میں قائم کیا گیا تھا۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://wam.ae/en/details/1395302823346

WAM/Urdu