کاروباری خواتین کے بارے میں وی فائی علاقائی سربراہ اجلاس اگلے ہفتے دبئی میں ہوگا

  • القمة الإقليمية لمبادرة تمويل رائدات الأعمال تعزز مشاركة المرأة في دعم التنمية الاقتصادية
  • القمة الإقليمية لمبادرة تمويل رائدات الأعمال تعزز مشاركة المرأة في دعم التنمية الاقتصادية

دبئی، 12 فروری، 2020 (وام) ۔۔ مشرق وسطی اور شمالی افریقہ کے خطے اور دنیا بھر سے 250 سے زائد حکومتی نمائندے، کاروباری رہنما اور کاروباری خواتین اگلے ہفتے دبئی میں پہلے وی فائی علاقائی سربراہ اجلاس میں شرکت کریں گی۔ سربراہ اجلاس میں اس بات پر غور کیا جائے گا کہ کس طرح خواتین کے زیر انتظام کاروباری اداروں کی صلاحیتوں سے زیادہ سے زیادہ استفادہ کیا جاسکتا ہے۔ یہ پروگرام گلوبل وومن فورم دبئی، جی ڈبلیو ایف ڈی 2020 کے موقع پر منعقد ہوگا ۔ یہ پروگرام 16 اور 17 فروری کو متحدہ عرب امارات کے نائب صدر، وزیر اعظم اور دبئی کے حکمران شیخ محمد بن راشد آل مکتوم کی سرپرستی میں ہوگا۔ وی فائی علاقائی سربراہ اجلاس کا اہتمام دبئی ویمن اسٹبلشمنٹ، ڈی ڈبلیو ای اور ویمن انٹرپرینیور فنانس انیشی ایٹو کے تحت کیا جارہا ہے۔ اس فورم کا قیام ترقی پذیر ممالک میں خواتین کی زیرقیادت کاروباروں کے لئے مالی اعانت فراہم کرنے کے لئے 2017 میں عمل میں آیا تھا۔ وی فائی نے ایسے پروگراموں کے لئے 249 ملین ڈالر مختص کیے ہیں جن سے 114,000خواتین کی ملکیت والی ایس ایم ایز کو فائدہ ہوگا اور سرکاری اور نجی شعبے سے 2.6 ارب ڈالر کا انتظام کیا جائے گا۔ اس اقدام کو عالمی بینک میں رکھا گیا ہے اور چھ کثیرالجہتی ترقیاتی بینکوں کے ذریعہ اس کو نافذ کیا گیا ہے۔ اس اقدام کو متحدہ عرب امارات کی حکومت سمیت 14 عطیہ دہندگان کی مدد حاصل ہے ۔ اس اجلاس کا مقصد پورے خطے میں خواتین کی کاروباری صلاحیتوں کو تیز کرنے کے لئے اقدامات کو فروغ دینا ہے۔ اجلاس میں میں کاروباری خواتین کو درپیش مسائل پر گہرائی سے بات کرنے، سیکھنے اور نیٹ ورکنگ کے مواقع پیش کرنے والے سیشن پیش کیے جائیں گے۔ افتتاحی اجلاس میں ورلڈ بینک گروپ کے صدر ڈیوڈ مالپاس دنیا بھر میں خواتین کے کاروباری پروگراموں کو آگے بڑھانے میں We-Fi کی طرف سے پیشرفت اور مشرق وسطیٰ اور شمالی افریقہ کے خطے میں خواتین کو معاشی طور پر بااختیار بنانے میں مدد کی اہمیت کے بارے میں تفصیلی خطاب کریں گے۔ ایک اعلی سطح پینل اجلاس میں خطے میں ان اداروں، کمپنیوں اور پروگراموں پر روشنی ڈالی جائے گی جنھوں نے جدید کاروباری حل تیار کیے ہیں تاکہ کاروباری خواتین کو ان کے کاروبار کی ترقی میں مالی اعانت، مارکیٹ اور پالیسی میں رکاوٹوں پر قابو پانے میں مدد ملے۔ دن کے آخر میں ایک مباحثے کے میں اس خطے میں کاروباری خواتین کو بااختیار بنانے اور رکاوٹوں پر قابو پانے کے لئے نئے حل پیش کئے جائیں گے۔ وی۔فائی وزارتی راؤنڈ ٹیبل میں خطے کے ملکوں کے وزراء، بین الاقوامی تنظیموں کے سربراہان اور CSO شرکت کریں گے اور صنفوں کے مابین معاشی مساوات کے لئے قانونی اور پالیسی فریم ورک کیلئے مل کر کام کرنے پر غور کای جائے گا۔ فورم کے دوران وی فائی سمٹ کے شرکاء کو ورکشاپس کے دوران اہم مہارتوں کی تربیت سے فائدہ اٹھانے کا موقع بھی ملے گا جس میں خواتین کے زیرقیادت کاروباری اداروں کو مالی اعانت فراہم کرنے سمیت متعدد موضوعات شامل ہیں۔ اجلاس میں ای کامرس کا فائدہ اٹھاتے ہوئے فروخت میں اضافے، ویلیو چین شراکت داری اور تنازعات کے شکار علاقوں میں کاروباری خواتین کی حمایت اور خواتین تاجروں کے خلاف قانونی امتیازی سلوک کا مقابلہ کرکے کاروباری خواتین کی حوصلہ افزائی کے طریقوں پر بھی تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302823559

WAM/Urdu