عرب امارات کے بنکنگ اثاثے فروری میں 095ء3 ٹریلین درہم ہوگئے


ابوظہبی ، 18 مارچ ، 2020 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے مرکزی بنک نے فروری 2020 کیلئے ملک کے بنکنگ شعبے کے اعشاریئے اعداد کا اجراء کردیا ، اس کے مطابق مجموعی بنکنگ اثاثے 095ء3 ٹریلین درہم کے ہوگئے ہیں – سالانہ بنیادوں پر مرتب کئے گئے ان اعداد و شمار کے مطابق فروری 2020 میں مجموعی بنکنگ اثاثوں کی مالیت میں 4ء6 فیصد اضافہ ہوا ، فروری 2019 میں یہ اثاثے 909ء2 ٹریلین درہم کے تھے ۔ یہ اعداد عرب امارات کے بنکنگ شعبے میں ایک رکارڈ ہیں اور یہ خلیج تعاون کونسل اور مشرق وسطی کے دیگر ممالک کے مقابلے میں ممتاز اور سبقت والا درجہ بھی رکھتے ہیں – مرکزی بنک کے مطابق اماراتی بنکوں کے کھاتوں ( ڈیپازٹس ) میں اضافہ ہوا جوکہ فروری میں بڑھ کر 828ء1 ٹریلین درہم کے ہوگئے اور یہ گزشتہ سال کے اسی عرصہ سے 4ء3 فیصد زائد ہیں ، فروری 2019 میں اس کا حجم 768ء1 ٹریلین درہم تھا – مجموعی قرض کے اعداد بھی فروری 2020 میں بڑھ کر 745ء1 ٹریلین درہم کے ہوگئے جوکہ فروری 2019 میں 672ء1 ٹریلین درہم سے 4ء4 فیصد زیادہ ہے ۔ اندرون ملک قرض بڑھ 524ء1 ٹریلین درہم سے بڑھ کر 571ء1 ٹریلین درہم ہوگیا ، حکومتی قرض کی قدر 5ء231 ارب درہم رہی ، نجی شعبے کا قرض 14ء1 ٹریلین درہم اور سرکاری شعبے کا قرض 185 ارب درہم ہوگیا – متحدہ عرب امارات میں بنکوں کی مجموعی سرمایہ کاری بڑھ کر 6ء409 ارب درہم ہوگئی جوکہ فروری 2019 میں 4ء358 ارب درہم سے 3ء14 فیصد زیادہ ہے – ترجمہ ۔ تنویر ملک – http://www.wam.ae/en/details/1395302831556

WAM/Urdu