ڈی ایف ایس اے کا سائبرحملوں اور دھوکہ دہی کے خطرات کے خلاف انتباہ


دبئی ، 24 مارچ ، 2020 (وام) ۔۔ دبئی فنانشل سروسز اتھارٹی ، ڈی ایف ایس اے نے کہا ہے کہ وہ کوویڈ19 وبائی مرض کی ابھرتی ہوئی صورتحال کے مضمرات کا باریک بینی سے جائزہ لیتے ہوئے ان کے حل کی کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے۔ ڈی ایف ایس اے نے ایک بیان میں کہا کہ وہ وبائی مرض کو پھیلانے پر قابو پانے کی کوششوں میں دبئی اور متحدہ عرب امارات کی مدد کے لئے تمام ضروری عملی اور احتیاطی اقدامات اٹھائے گا اور اس سلسلے میں تمام سرکاری اداروں کے ساتھ مل کر کام جاری رکھے گا۔ بیان میں کہا گیاہے کہ اس غیر معمولی عالمی صورتحال کے فوری اور طویل مدتی اثرات کا جائزہ لینے کے لئے ، مالی استحکام اور صارفین کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے ڈی ایف ایس اے دبئی انٹرنیشنل فنانشل سینٹر ، ڈی آئی ایف سی میں کمیونٹی کے ساتھ باقاعدہ سرگرم عمل ہے اتھارٹی کے مطابق بین الاقوامی ریگولیٹری معیارات نے گذشتہ ایک دہائی کے دوران مالیاتی نظام میں لچک کو مزید مضبوط کیا ہے۔ گزشتہ وقتوں کے مقابلے میں بینکوں میں اب اعلی سطح سرمایہ اور لیکویڈیٹی ہے۔ ڈی ایف ایس اے کا کہنا ہے کہ موجودہ حالات مالی اداروں میں سائبرٹ ٹیکس ، فشنگ کوششوں اور دھوکہ دہی کے خطرے کو بڑھا سکتے ہیں۔ ڈی ایف ایس اے DIFC ریگولیٹ کمیونٹی کو اس سے متعلق چوکنا رہنے کی ہدایت کرتا ہے۔ ڈی آئی ایف سی فرم ڈی ایف ایس اے سائبر تھریٹ انٹیلی جنس پلیٹ فارم کو استعمال کرنے کے لئے اندراج خود کورجسٹر کرائیں ، اور سائبر خطرے سے متعلق معلومات کو اپنی سائبر سکیورٹی کو بڑھانے کے لئے استعمال کریں۔ اتھارٹی نے تصدیق کی کہ وہ عرب امارات اور دبئی حکومتوں کی طرف سے عرب امارات کی معیشت کے اٹھائے گئے تمام اقدامات کی حمایت کرے گی۔ ترجمہ۔تنویر ملک http://wam.ae/en/details/1395302832595

WAM/Urdu