جمعرات 13 اگست 2020 - 1:36:45 صبح

شارجہ میں پہلی ششماہی کے دوران 6.2ارب درہم کی لین دین ہوئی


شارجہ، 29 جولائی ،2020 (وام) ۔۔ شارجہ میں رواں مالی سال کی پہلی ششماہی کے دوران 6.2 ارب درہم کی 28,710 جائیدادوں کی لین دین ہوئی ہیں جو گزشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 4.1 فیصد زیادہ ہے۔ شارجہ رئیل اسٹیٹ رجسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کی تازہ ترین رپورٹ کے مطابق سال کے پہلے چھ مہینوں میں ریکارڈ 15.3 ملین مربع فٹ کی فروخت کی گئی۔ محکمہ شارجہ رئیل اسٹیٹ رجسٹریشن کے ڈائریکٹر جنرل عبدالعزیز احمد الشمسی نے کہا کہ اس سے ثابت ہوتا ہے کہ سپریم کونسل کے رکن ڈاکٹر شیخ سلطان بن محمد القاسمی کی ہدایت اور ولی عہد اور نائب حکمران شارجہ اور شارجہ ایگزیکٹو کونسل کے چیئرمین شیخ سلطان بن محمد بن سلطان القاسمی کی نگرانی میں شارجہ میں رئیل اسٹیٹ کا شعبہ مضبوط بنیادوں پر قائم ہے۔ الشمسی نے حکومتی اور نجی اداروں، کاروباری شعبوں اور افراد کی حمایت میں حکومت شارجہ کی جانب سے حال ہی میں منظور کردہ اقتصادی پیکجز اور فیصلوں کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ ان میں معاشی اداروں کے لئے سالانہ فیس سے تین ماہ کی چھوٹ شامل ہے۔ انکا کہنا تھا کہ فیصلوں میں ادارہ جاتی اور معاشرتی کام کے تمام پہلوؤں کا احاطہ کیا گیا ہے۔ الشمسی نے کہا کہ حکومت شارجہ امارت میں بنیادی ڈھانچے کے ترقیاتی منصوبوں پر بہت زیادہ توجہ دیتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ امارت اسلامیہ کے تمام شہروں میں جدید سڑکیں، سیاحوں کیلئے نئی سہولیات اور ترقیاتی منصوبوں نے سرمایہ کاروں اور کاروباری حضرات کو امارات میں قیام اور سرمایہ کاری کے لئے کافی حد تک راغب کیا ہے۔ الشمسی نے کہا کہ سرمایہ کاروں، رہائشیوں، ریٹائرڈ افراد اور ملک بھر میں تعلیمی اداروں میں تعلیم حاصل کرنے کے خواہشمند افراد کے لئے طویل مدتی رہائشی ویزوں کی فراہمی کے حالیہ حکومتی فیصلوں کا اس سلسلے میں نمایاں اثر پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ امارت میں غیر ملکیوں کو بھی رئیل اسٹیٹ کے شعبے میں مختلف منصوبوں سے فائدہ اٹھانے کے مواقع دیئے گئے ہیں جس سے مقامی، خلیجی، عرب اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کے اعتماد میں نمایاں اضافہ ہوا ہے۔ الشمسی نے کہا کہ رواں سال کی پہلی ششماہی میں ریکارڈ شدہ رئیل اسٹیٹ لین دین میں مرکزی برانچ کا حصہ 96 فیصد تھا۔ شارجہ میں سال کی پہلی سہ ماہی میں 2.8 ارب درہم مالیت کے 1,166 تک رہن کا لین دین ریکارڈ کیا گیا۔ سال کی پہلی ششماہی میں امارت میں 1,218 تک فروخت کا لین دین رجسٹرڈ تھا۔ ان میں سے زیادہ تر شارجہ شہر میں ریکارڈ کی گئیں جن میں 1,030 لین دین کی مالیت 1.6 ارب درہم ہے۔ سال 2020 کے پہلے چھ مہینوں میں امارت شارجہ میں جائیداد کے لین دین میں دنیا بھر کی 44 قومیتوں کے سرمایہ کاروں نے سرمایہ کاری کی ۔ ان میں خلیج تعاون کونسل کے 4,392سرمایہ کار شامل ہیں جنہوں نے 5.4 ارب درہم مالیت کی 5,584 پراپرٹی کا کاروبار کیا۔ اسی طرح 630 غیر ملکی سرمایہ کاروں نے 853 ملین درہم کی 633 جائیدادوں کا سودا کیا۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302858953

WAM/Urdu