منگل 29 ستمبر 2020 - 6:20:04 شام

آسٹریلیا میں عرب امارات کی حکمت عملی برائے انسداد دہشتگردی و شدت پسندی پیش


کینبرا ، 10 ستمبر ، 2020 (وام) ۔۔ آسٹریلیا میں متحدہ عرب امارات کے سفیر عبداللہ علی عتیق السبوسی نے دہشت گردی اور متشدد شدت پسندی کیخلاف متحدہ عرب امارات کی حکمت عملی کے کلیدی نکات کو پیش کیا ہے جن میں خصوصی طور پر متعلقہ قانونی اقدامات ، سماجی ، ثقافتی و مذہبی اقدام اور متشدد شدت پسندی کی روک تھام میں میڈیا کا کردار شامل ہیں – انہوں نے یہ تفصیلات آسٹریلیا کے سٹریٹجک پالیسی انسٹی ٹیوٹ کی اجنب سے منعقدہ ایک ورچوئل سیشن میں پیش کیں ۔ اس میں متحدہ عرب امارات کے تناظر میں انسداد شدت پسندی پر اور متحدہ عرب امارات اور اسرائیل میں امن معاہدہ ، خواتین کے امور ، بحیرہ پیسفیک کے ممالک کو عرب امارات کی امداد اور عرب امارات و آسٹریلیا کے درمیان دو طرفہ تعلقات پر غور کیا گیا – السبوسی نے متحدہ عرب امارات میں انسداد شدت پسندی کے موجود مراکز کی اہمیت پر روشنی ڈالی جن میں بالخصوص بین الاقوامی مرکز برائے رواداری ، سواب سنٹر اور الھدایۃ شامل ہیں ، انہوں نے تشدد اور دہشت گردی کی روک تھام کیلئے صلاحیت بڑھانے کی کاوشوں کو بھی بیان کیا – اس سیشن میں انسداد دہشت گردی و شدت پسندی کے عالمی اقدامات میں متحدہ عرب امارات کے کردار اور تعاون کو بھی بیان کیا گیا ہے جن میں دہشت گردی کیخلاف میڈیا کے کردار سے متعلق عرب لیگ کی کانفرنس میں شرکت اور اس میں طے پانے والے معاہدے بھی شامل تھے ۔ یہ اقدامات ہر قسم کی شدت پسندی اور دہشت گردی کی روک تھام ، شدت پسند نظریات کے تدارک اور عالمی امن و سلامتی کے قیام سے متعلق ہیں – سیشن کے اختتام پر متحدہ عرب امارات کی وہ حکمت عملی بھی پیش کی گئی جو کہ خواتین کو بااختیار بنانے ، ملک میں خواتین کے مقام کو بلند کرنے اور فیصلہ سازی کے عمل میں انہیں شریک کرنے سے متعلق ہے – ترجمہ ۔ تنویر ملک – http://www.wam.ae/en/details/1395302868772

WAM/Urdu