بدھ 25 نومبر 2020 - 5:53:00 شام

چیلنجز نے جی سی سی ممالک میں مشترکا عمل کے مواقع پیدا کیئے ہیں : القرقاوی کا جی سی سی کمیٹی میں خطاب

  • الإمارات تترأس اجتماع اللجنة الوزارية المكلفة بمتابعة تنفيذ قرارات مجلس التعاون الخليجي
  • الإمارات تترأس اجتماع اللجنة الوزارية المكلفة بمتابعة تنفيذ قرارات مجلس التعاون الخليجي

دبئی ، 21 نومبر ، 2020 (وام) ۔۔ خلیج تعاون کونسل کی سپریم کونسل کی طرف سے مشترکہ عمل کی قراردادوں پر عملدرآمد سے متعلق تنظیم کی کمیٹی کا 21واں اجلاس ورچوئل انداز میں متحدہ عرب امارات کی زیر صدارت منعقد ہوا – اس سے افتتاحی خطاب میں وزیر برائے کابینہ امور محمد بن عبداللہ القرقاوی کا کہنا تھا کہ دنیا کو اس وقت مختلف شعبوں میں جن تیزی سے آتی تبدیلیوں کا سامنا ہے کی وجہ سے سماجی اور اقتصادی نظام کیلئے نئے چیلنجز سامنے آئے ہیں تاہم یہ چیلنجز خلیجی ممالک کی ترقی اور رابطوں کیلئے مشترکہ عمل کا موقع بھی میسر کررہے ہیں – انہوں نے کہا کہ آنے والے عرصہ میں پیداوار بڑھانے کیلئے جی سی سی ارکان کے درمیان تعاون بہت بڑی قوت ہوگا ، کامیابی کے موقع موجود ہیں اور امید ہے کہ ہم سب تعمیری تعاون کریں اور جی سی سی ممالک کو مختلف شعبوں میں میدانوں میں عظیم تر کامیابی میسر کرنے کیلئے مربوط بنائیں گے – کمیٹی اجلاس کے دوران تنظیم کے رکن ممالک کی طرف سے وہ پیشرفت رپورٹس بھی پیش ہوئیں جو کہ مشترکہ عمل قراردادوں پر عمل درآمد سے متعلق ہیں جبکہ جی سی سی مشترکا مارکیٹ کے تناظر میں حاصل شدہ کامیابیوں کا بھی جائزہ لیا گیا – ترجمہ ۔ تنویر ملک – http://www.wam.ae/en/details/1395302888478

WAM/Urdu