منگل 24 نومبر 2020 - 12:00:30 صبح

متحدہ عرب امارات  نے برڈ فلو کے باعث چار مماک سے پرندوں اور پرندوں کی مصنوعات کی درآمد پر پابندی عائد کردی


ابوظہبی ، 21 نومبر، 2020 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کی وزارت موسمیاتی تبدیلی و ماحولیات،ایم او سی سی اے ای نے جانوروں کی صحت کے عالمی ادارے ،او آئی ای کے نوٹیفیکشن کے مطابق ایسے علاقے جہاں نومبر2020 کے دوران ایوین انفلوئنزا کی وبا پھیلی وہاں سے پرندوں اور ان کی مصنوعات کی درآمد پر پابندی کے حوالے سے چار قرار دادیں جاری کی ہیں۔ تین قراردادوں کے تحت نیدرلینڈ ، جرمنی اور روس کے منتخب علاقوں سے گھریلو اور جنگلی زندہ پرندوں,نمائشی پرندوں,چوزوں ، انڈوں اور ان کی مصنوعات کی درآمد پر پابندی عائد کی گئی ہے۔چوتھی قرارداد میں برطانیہ کے متعدد علاقوں سے پولٹری گوشت اور ٹیبل انڈوں کی درآمد پر پابندی عائد کرنے کا حکم جاری کیاگیا ہے۔ یہ قراردادیں فوڈ سیفٹی اور تحفظ کو یقینی بنانے کے ایم او سی سی اے ای کی ترجیحات کے مطابق ہے۔جس کے مطابق وزارت خوراک درآمدی منڈیوں میں جانوروں کی صحت کی صورتحال پر قریبی نگرانی رکھتی ہے.

نیدرلینڈز اور جرمنی کے علاوہ ہیور فورڈشائر کاؤنٹی،چیشائر اور چیسٹر ویسٹ اور چیسٹر ایریا سے پولٹری کی درآمد پر پابندی برطانیہ میں برڈ فلو پھیلنے کے بعد عائد کی گئی ہے۔ ایم او سی سی اے ای نے نیدرلینڈ سے اس وقت تک گھریلو اور جنگلی زندہ پرندوں ، نمائشی پرندوں ، چوزوں انڈوں اوران کی مصنوعات کی درآمد پر پابندی عائد کردی جب تک وہان بیماری کے خاتمے کی مکمل تصدیق نہیں ہوجاتی ۔ اسی طرح ایم او سی سی اے ای نے جرمنی سے اس وقت تک ہر قسم کے گھریلو اور جنگلی زندہ پرندوں ، نمائشی پرندوں پرپابندی عائد کردی ہے جب تک کہ اس ملک کو بیماری سے پاک قرار نہ دیا جائے۔ تاہم وزارت نے انڈوں کی درآمد کی رضاکارانہ صحت کا سرٹیفکیٹ فراہم کرنے کی صورت میں اجازت دی ہے ۔ اس کے علاوہ ایم او سی سی اے ای نے روس کے علاقوں یوگرا،چھیلیابنسک اوبلاست،جمہوریہ تاتارستان ، سمارا اوبلاست اور ٹومسک اوبلاست کے علاقوں سے گھریلو اور جنگلی زندہ پرندوں ، نمائشی پرندوں اور ان کی مصنوعات کی درآمد پر پابندی عائد کردی ہے۔ تاہم انڈے مرغی کا گوشت اوراس کی مصنوعات صحت کے سرٹیفکیٹ مہیا کئے جانے پر درآمد ہوسکیں گے۔ ترجمہ۔تنویر ملک http://www.wam.ae/en/details/1395302888483

WAM/Urdu