منگل 26 جنوری 2021 - 7:39:14 صبح

ابوظہبی کے نئے تیل ذخائر ملکی اقتصادی ترقی اور قابل اعتماد توانائی ذریعہ کے استحکام کا باعث ہوگی : سھیل المزروعی


ابوظہبی ، 23 نومبر ، 2020 (وام) ۔۔ وزیر توانائی و انفراسٹرکچر سھیل بن محمد المزروعی کا کہنا ہے کہ ابوظہبی میں تیل ذخائر کی حالیہ نئی دریافت نہ صرف متحدہ عرب امارات کی اقتصادی ترقی میں متحرک کردار ادا کرے گی بلکہ اس سے قابل اعتماد توانائی ذرائع کی ترسیل میں ملک کا مقام مزید مستحکم ہوگا – سپریم پٹرولیم کونسل کی جانب سے اتوار کو کیئے جانے والے اعلان کے مطابق ابوظہبی کی امارت میں غیر روایتی قابل حصول تیل کے نئے 22 ارب بیرل کے ذخائر ( ایس ٹی بی ) دریافت ہوئے ہیں جوکہ آن شور ذخائر ہیں جبکہ امارت کے روایتی تیل ذخائر میں بھی 2 ارب بیرل ( ایس ٹی بی ) کا اضافہ ہوا ہے – وزیر توانائی نے آج بیان میں کہا کہ نئے ذخائر کی یہ دریافت ملک کی مجموعی ترقی کے آئیندہ پچاس سالہ منصوبہ سازی میں معاون ہوگا ، اس سے ان غیر ملکی سرمایہ کاروں کو بھی مزید ترغیب ملے گی جو دنیا میں تیزی سے ہوتی تبدیلی کے تناظر میں متحدہ عرب امارات کو سرمایہ کاری کیلئے جنت تصور کررہے ہیں ، اس سے ملک میں تیل شعبے کے تمام حوالوں سے سرمایہ کاری کے نئے وسیع مواقع پیدا ہونگے ، یہ پیشرفت تیل کی عالمی منڈی میں متحدہ عرب امارات کے کلیدی کردار کو مزید تقویت دے گے اور 2030 تک ملک کی یومیہ تیل پیداوار کو 50 لاکھ بیرل تک پہنچانے میں ادنوک نیشنل آئل کمپنی کے جاری ترقیاتی آپریشنز اور ہدف میں بہت اہم کردار ادا کرے گی – انہوں نے کہا کہ حالیہ برسوں میں تیزی سے ترقی کرنے والے شعبوں میں متحدہ عرب امارات کا توانائی شعبہ بھی شامل ہے ، متحدہ عرب امارات اپنے توانائی ذرائع کو کثیر الجہتی بنانے کیلئے پرعزم ہے تاکہ توانائی کی بڑھتی طلب کو پورا کرنے کے ساتھ اقتصادی ضروریات اور ماحولیاتی مقاصد میں توازن قائم کرسکے جوکہ ملک کی قیادت کی ہدایات اور قومی توانائی حکمت عملی 2050 کے مطابق ہیں – ترجمہ ۔ تنویر ملک – http://www.wam.ae/en/details/1395302889187

WAM/Urdu