بدھ 20 جنوری 2021 - 3:12:29 شام

متحدہ عرب امارات سیاحت کے فروغ کیلئے مشترکہ عرب اقدام کی حمایت کرتاہے:احمد الفلاسی


ابوظبی، 4 جنوری، 2021 (وام) ۔۔ وزیر مملکت برائے کاروبار اور ایس ایم ایز ڈاکٹر احمد بلھول الفلاسی نے عرب ممالک میں سیاحت کو فروغ دینے کے لئے متحدہ عرب امارات کی طرف سے مشترکہ اقدام کی حمایت کرنے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔ انہوں نے یہ بیان عرب وزارتی کونسل برائے سیاحت کے 23 ویں ورچول اجلاس سے خطاب کے دوران دیا۔ اجلاس میں عرب ممالک میں سیاحت کے انچارج وزرا نے شرکت کی۔ ڈاکٹر احمد بلھول الفلاسی نے کونسل کے اجلاسوں کے ذریعے خطے میں سیاحت کے شعبے کو ترقی دینے کے مقصد سے مشترکہ اقدامات کے لئے نئے اور موثر فریم ورک کا مسودہ تشکیل دینے میں باہمی رابطوں اور تعاون کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔ انھوں نے کہاکہ خاص طور پر موجودہ غیر معمولی حالات جن میں دنیا بھر میں کوویڈ ۔19 وباء کی وجہ سے سیاحت کا شعبہ بری طرح متاثر ہوا ہے اس طرح کے تعاون کی ضرورت مزید بڑھ گئی ہے۔ انہوں نے عرب ملکوں کے درمیان سیاحت کی اہمیت اور اس شعبے کے شہریوں، رہائشیوں، سیاحوں اور ملازمین کے لئے محفوظ ماحول پیدا کرنے کے لئے عالمی سطح پر منظور شدہ صحت اور حفاظت کے طریقہ کار پر عملدرآمد کی ضرورت پر زور دیا جس سے سیاحوں کا اعتماد بھی حاصل ہوگا۔ انھوں نے متحدہ عرب امارات کی طرف سے سیاحت کے شعبے کی بحالی اور نمو کی حمایت اور اس میں تیزی لانے کے لئے نافذ کردہ طریقہ کار اور اقدامات خاص طور پر سیاحتی اداروں کی حمایت کرنے، سیاحت میں ملازمین کی مدد کرنے، اقتصادی بحالی کے منصوبے کے فریم ورک کے تحت سیاحت کے اقدامات کا آغاز اور شراکت دار ممالک کے ساتھ محفوظ سفری راستوں کے قیام پر تفصیل سے روشنی ڈالی۔ انہوں نے مقامی سیاحت کی حمایت کے لئے متحدہ عرب امارات کی کوششوں کے ساتھ ساتھ حال ہی میں شروع کی گئی مقامی سیاحت کی حکمت عملی کا بھی ذکر کای۔ انھوں نے کہا کہ اس سے متحدہ عرب امارات میں مقامی سیاحت کو فروغ ملے گا اور پائیدار مقامی، علاقائی اور بین الاقوامی سیاحت کی منزل کی حیثیت سے اس کی اولین پوزیشن مستحکم ہوگی۔ اپنے خطاب کے اختتام پر الفلاسی نے کونسل کے ایجنڈے پر مجوزہ عنوانات کی اہمیت اور عرب ممالک میں سیاحت کی بحالی اور نمو کو تیز کرنے میں ان کے کردار کے ساتھ ساتھ معاشی اور معاشرتی ترقی کے حصول میں سیاحت کے کردار پر زور دیا۔ کونسل کے 23 ویں اجلاس میں عرب تعاون کو مضبوط بنانے اور سیاحت کے شعبے میں انضمام سے متعلق متعدد امور پر تبادلہ خیال کیا گیا جس میں فلسطینی سیاحت کی حمایت، عرب سیاحت اور سفر کے شعبے کی بحالی کے لئے میکانزم قائم کرنا، اس شعبے میں کام کرنے والے عرب انسانی وسائل کی تربیت، عرب سیاحت کے تحفظ کی حکمت عملی تیار کرنا اور عرب ممالک اور چین جیسے دیگر عالمی سیاحتی مقامات کے مابین تعاون کو فروغ دینا شامل ہیں۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302899410

WAM/Urdu