پیر 05 دسمبر 2022 - 1:09:32 صبح

عبداللہ بن زاید نے نئی دہلی میں بھارتی وزیر خارجہ سے ملاقات کی۔

  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
  • عبدالله بن زايد يلتقي وزير خارجیة الھند في نیودلھي
ویڈیو تصویر

نئی دہلی، 22 نومبر، 2022 (وام) ۔۔ وزیر برائے خارجہ امور و بین الاقوامی تعاون عزت مآب شیخ عبداللہ بن زاید آل نھیان نے بھارت کے امور خارجہ کے وزیرسبرامنیم جے شنکر سے ملاقات کی ہے۔

نئی دہلی میں ہونے والی ملاقات کے دوران دونوں وزراء نے دوطرفہ جامع اسٹریٹجک شراکت داری فریم ورک کے تحت، متحدہ عرب امارات اور بھارت کے تاریخی تعلقات کو مضبوط بنانے کے طریقوں پر تبادلہ خیال کیا۔

دونوں وزرا خارجہ نے جامع اقتصادی شراکت داری کے معاہدے (سی ای پی اے) کے فریم ورک کے تحت دو طرفہ تجارت و اقتصادی تعلقات کو فروغ دینے کے امکانات پر بھی تبادلہ خیال کیا، جس پر دونوں ممالک نے 2022 میں دستخط کیے تھے۔ اس کے علاوہ ملاقات میں صحت اور ٹیکنالوجی کے شعبوں میں دونوں ممالک کے تعاون کو فروغ دینے پر غور کیا گیا۔

شیخ عبداللہ اور جے شنکر نے باہمی دلچسپی کے متعدد امور کے ساتھ ساتھ تازہ ترین علاقائی و عالمی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔

ملاقات میں گروپ 20 (جی 20) کے 2023 کے صدر کے طور پر بھارت کی ترجیحات اور گروپ کی سرگرمیوں میں متحدہ عرب امارات کی شرکت کو مستحکم کرنے کے طریقوں، مسلسل دوسرے سال مہمان ملک کے طور پر خدمات انجام دینے کے ساتھ ساتھ پائیدار ترقی کو فروغ دینے کی جانب جی 20کی سرگرمیوں میں دونوں ممالک کے نجی شعبے کی شراکت بڑھانے کے طریقوں پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

ملاقات میں 12 یو ٹو گروپ ، برکس اور شنگھائی تعاون تنظیم جیسے کثیرالجہتی گروپوں اور تنظیموں کی سطح پر یو اے ای-انڈیا تعاون کے امکانات کا بھی جائزہ لیاگیا۔

شیخ عبداللہ نے کہا کہ متحدہ عرب امارات اور بھارت اور ان کی قیادت کے درمیان مضبوط، تاریخی تعلقات ہیں، ان کی شراکت داری سے بہت سی کامیابیاں حاصل ہوئی ہیں جو دونوں ممالک میں پائیدار ترقی کو آگے بڑھارہی ہیں۔

شیخ عبداللہ نے مزید کہا کہ یو اے ای- بھارت سی ای پی اے کے مطابق، دونوں ممالک اگلے پانچ سالوں میں غیر تیل کی تجارتی قدر تقریباً 100 ارب ڈالر تک بڑھانے کے اپنے ہدف کو حاصل کرنے کے لیے دوطرفہ اقتصادی تعاون کو بڑھانے کے خواہاں ہیں۔

عزت مآب نے کہاکہ دوطرفہ تعلقات کے تحت حاصل ہونے والی مختلف کامیابیاں دونوں ممالک کی قیادت کی شراکت داری اور تعاون عالمی سطح پر ایک ایسا ماڈل قائم کرنے کے خوابوں کا ثمر ہے جو پائیدار اقتصادی ترقی اور خوشحالی کو فروغ دیتا ہے۔

شیخ عبداللہ نے دونوں ممالک کے تعاون اور کثیر الجہتی تعاون میں ایک نئے اور خوشحال باب کی خواہش کا اظہار کیا جو علاقائی اور عالمی سطح پر ان کی حیثیت کو بلند کرنے میں معاون ثابت ہوگا۔

انہوں نے بھارت کی صدارت کے دوران جی 20 ممالک میں اپنی شمولیت کو مستحکم کرنے کے ساتھ ساتھ گروپ کے امور میں نجی شعبے کی شرکت کی حمایت کرنے پر متحدہ عرب امارات کی دلچسپی کو اجاگر کیا۔

ملاقات کے بعد جے شنکر نے شیخ عبداللہ اور ان کے وفد کے اعزاز میں ظہرانہ دیا ۔

ملاقات میں وزیر مملکت برائے بین الاقوامی تعاون ریم بنت ابراہیم الہاشمی ، بھارت میں متحدہ عرب امارات کے سفیرڈاکٹر عبدالناصر الشعالی، وزارت خارجہ و بین الاقوامی تعاون (ایم او ایف اے آئی سی)میں اقتصادی اور تجارتی امور کے معاون وزیر خارجہ سعيد مبارك الهاجری اور ایم او ایف اے آئی سی میں معاون وزیر برائے امور اعلیٰ سائنس و ٹیکنالوجی عمران انور شرف الہاشمی بھی شریک تھے۔

 

ترجمہ۔تنویر ملک

TS-22-255-29156

Maryam/ Farrukh Tanveer Malik