متحدہ عرب امارات 155,000یمنیوں کو پینے کے پانی کی فراہمی یقینی بنارہا ہے

  • الإمارات تفتتح مشروعا لتزويد 15 ألفا من سكان تعز بالمياه النقية
  • الإمارات تفتتح مشروعا لتزويد 15 ألفا من سكان تعز بالمياه النقية
  • الإمارات تفتتح مشروعا لتزويد 15 ألفا من سكان تعز بالمياه النقية

تیاز، 4 نومبر ، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات نے یمن کے بحیرہ احمر کے ساحلی شہر زوباب میں پندرہ ہزار سے زیادہ یمنیوں کو پینے کے صاف پانی کی فراہمی کے لئے ایک اسٹریٹجک منصوبہ شروع کیا ہے۔ یہ منصوبہ ان 31 منصوبوں میں سے ایک ہے جو حال ہی میں متحدہ عرب امارات نے ہلال احمر امارات کے ذریعے خطے میں شروع کیے۔ ان منصوبوں کا مقصد آزاد کرائے گئے علاقوں کے 155,000 یمنیوں کی بنیادی ضروریات کو پورا کرنا ہے ۔ افتتاحی تقریب میں بحیرہ احمر کے ساحل علاقے میں ہلال احمر امارات کے نمائندے اور زباب باب المندب کے ڈائریکٹر جنرل محمد فادل الصحیری نے شرکت کی۔ منصوبے کا مقصد کنویں کی بحالی اور ایک مربوط شمسی توانائی نظام قائم کرنے کے ساتھ ساتھ مقامی پانی کے نیٹ ورک کو 30 کلو میٹر تک بڑھانا ہے۔ ہلال احمر امارات کے نمائندے نے کہا کہ یہ منصوبہ یمن کے بحیرہ احمر کے ساحل پر آزاد کرائے گئے متعدد علاقوں کیلئے متحدہ عرب امارات کی کلیدی خدمات اور انسانی ہمدردی پر شروع کئے گئے منصوبوں کا حصہ ہے۔ الصحیری نے زوباب کے عوام کی جانب سے متحدہ عرب امارات کی حکومت اور عوام کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ منصوبہ متحدہ عرب امارات کی طرف سے شروع کئے گئے اسٹریٹجک منصوبوں میں سے ایک ہے۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302800044

WAM/Urdu