دبئی پولیس،دبئی جوڈیشل انسٹی ٹیوٹ نے انسانی اسمگلنگ ماہرین کا پانچواں پروگرام شروع کردیا

  • إطلاق الدفعة الخامسة لبرنامج
  • إطلاق الدفعة الخامسة لبرنامج
  • إطلاق الدفعة الخامسة لبرنامج
  • إطلاق الدفعة الخامسة لبرنامج

ابو ظہبی ، 10 نومبر ، 2019 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اڑتیس ٹرینیزکا گروپ،سعودی عرب اور بحرین کے نمائندوں کے ساتھ انسانی سمگلروں کے گروہوں کی نشاندہی کے جدید طریقوں سے اگاہی اور تفتیشی میں مہارت حاصل کرنے کے لئے انسانی اسمگلنگ کے پانچویں تربیتی پروگرام میں شریک ہوگا۔ دبئی جوڈیشل انسٹی ٹیوٹ ،ڈی جے آئی میں پریس کانفرنس کے دوران دبئی پولیس کے اسسٹنٹ کمانڈر ان چیف آف ایکسیلینس ، میجر جنرل عبدالقدوس عبد الرزاق العبیدلی اور ڈی جے آئی کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر جمال السمیطیی نے اقوام متحدہ کے آفس برائے منشیات و جرائم یو این او ڈی سی ،کے ریجنل پروگرام آفیسر ڈاکٹر بورس زیمنسکی کی موجودگی میں اس پروگرام کے آغاز کااعلان کیا۔ یو این او ڈی سی کے اشتراک سے دبئی پولیس جنرل ہیڈ کوارٹرز اور ڈی جے آئی کے زیر اہتمام اس پروگرام میں ،قومی پولیس اتھارٹیز ،انسانی حقوق کی تنظیموں سمیت وفاقی اور مقامی حکومتوں کے بائیس اداروں کے اڑتیس ٹرینی شامل ہیں اس کورس میں سعودی عرب کے تین اور بحرین کے دو نمائندے حصہ لے رہے ہیں جو خلیج تعاون کونسل ، جی سی سی کے رکن ممالک کی پہلی بار نمائندگی کررہے ہیں۔ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے العبیدلی نے کہا کہ "یو این او ڈی سی سے منظور شدہ انسداد اسمگلنگ ماہرین کا یہ پروگرام عرب دنیا میں اپنی نوعیت کا پہلا تربیتی ہروگرام ہے جوانسداد انسانی اسمگلنگ کے لئے موثر اور پیشہ ورانہ مہارت مہیا کرے گااور انسانی اسمگلنگ سے نمٹنے کی قومی حکمت عملی 2016-2021 کے نفاذ میں معاونت کرے گا۔ "

انہوں نے مزید کہا کہ اس پروگرام کا مقصد حکومتی کارکردگی کو بہتر بنانے کی کوششوں کو اجاگر کرنا ہے یہ پروگرام ایک محفوظ معاشرے کی تشکیل کے لئے دبئی پلان 2021 کی معاونت بھی کرے گا۔ بورس زیمنسسکی نے کہاکہ"متحدہ عرب امارات عرب دنیا میں انسانی اسمگلنگ سے نمٹنے کے لئےقائدانہ کردار ادا کررہا ہے۔ '" انہوں نے انسانی اسمگلنگ کا مقابلہ کرنے کے لئے متحدہ عرب امارات کی کوششوں کو سراہا۔ جمال السمیطیی نے کہا کہ پروگرام کے گزشتہ چار سیشننز کے تربیت یافتہ اہلکاروں کی تعداد ایک سو دس ہوگئی ہے۔ پروگرام کا مقصد تربیت یافتہ افراد کو تحقیق ، انسانی سمگلنگ سے متعلق جرائم کی تحقیقات اور متاثرین کی دیکھ بھال کے لئے تیار کرنا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس پروگرام کا مقصد ٹرینیز کو سائنسی معلومات فراہم کرنا اور انسانی اسمگلنگ کے متاثرین سے نمٹنے کے لئے ضروری قوانین اور مہارت کے ساتھ متعلقہ مقامی ، علاقائی اور بین الاقوامی معلومات سے بھی آگاہ کرنا ہے۔ ترجمہ۔تنویر ملک http://www.wam.ae/en/details/1395302801616

WAM/Urdu