اقوام متحدہ کے وفد نے اماراتی خواتین کو بااختیار بنانے میں شیخہ فاطمہ کی کاوشوں کو سراہا

  • وفد أممي يشيد بجهود الشيخة فاطمة بنت مبارك للارتقاء بالمرأة الاماراتية
  • وفد أممي يشيد بجهود الشيخة فاطمة بنت مبارك للارتقاء بالمرأة الاماراتية
  • وفد أممي يشيد بجهود الشيخة فاطمة بنت مبارك للارتقاء بالمرأة الاماراتية
ویڈیو تصویر

ابوظبی، 13 نومبر ، 2019 (وہام) ۔۔ اقوام متحدہ کی اسسٹنٹ سیکرٹری جنرل برائے ریسورس مینجمنٹ، پائیداری اور شراکت داری اور اقوام متحدہ کی صنفی مساوات اور خواتین کو بااختیار بنانے کی ڈپٹی ایگزیکٹو ڈائریکٹر انیتا بھاٹیہ نے اماراتی خواتین کی ترقی اور انھیں بااختیار بنانے میں جنرل ویمن یونین کی چیئروومن، زچہ بچہ کی سپریم کونسل کی صدر اور فیملی ڈویلپمنٹ فاؤنڈیشن کی سپریم چیئر وومین شیخہ فاطمہ بنت مبارک کی کاوشوں کی تعریف کی ہے۔ ابوظبی میں اقوام متحدہ کے خواتین رابطہ دفتر کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر موضع الصحیحی کے ہمراہ عالمی ادارے کے وفد کے ساتھ ایک ملاقات میں جنرل ویمن یونین کی ڈائریکٹر نورہ السویدی نے کہا کہ متحدہ عرب امارات میں خواتین کو تمام معاشرتی حقوق حاصل ہیں ۔ انھوں نے کہا کہ اماراتی خواتین کو یہ حقوق متحدہ عرب امارات کی قیادت کی ہدایت اور شیخہ فاطمہ کی نگرانی کے باعث حاصل ہوئے ہیں۔ السویدی نے اماراتی خواتین کو بااختیار بنانے کے لئے قومی حکمت عملی کی بھی وضاحت کی اور کہا کہ اسے جی ڈبلیو یو کے ذریعے نافذ کیا جارہا ہے۔ انھوں نے خواتین کو بااختیار بنانے اور اس حوالے سے قانون سازی سمیت دیگر کامیابیوں پر روشنی ڈالی ۔ انہوں نے شیخہ فاطمہ کی رہنمائی اور تعاون سے متعدد اقدامات کے ذریعے خواتین کو بااختیار بنانے اور ان کی سیاسی شرکت کی حوصلہ افزائی کے لئے جنرل ویمن یونین کی کوششوں کے بارے میں بھی بات کی۔ ترجمہ: ریاض خان ۔ http://www.wam.ae/en/details/1395302802628

WAM/Urdu