اتوار 13 جون 2021 - 7:25:13 صبح

عالمی شہرت یافتہ جریدہ " نیچر " میں کووڈ 19 کی تشخیص کیلئے اماراتی صلاحیت کا اعتراف

  • مجلة "Nature" العالمية تنشر دراسة الإمارات حول استخدام الكلاب الجمركية في الكشف عن "كوفيد-19"
  • "الاتحادية للجمارك" تؤكد جاهزيتها للعمل عن بعد
  • مجلة "Nature" العالمية تنشر دراسة الإمارات حول استخدام الكلاب الجمركية في الكشف عن "كوفيد-19"
  • مجلة "Nature" العالمية تنشر دراسة الإمارات حول استخدام الكلاب الجمركية في الكشف عن "كوفيد-19"
  • مجلة "Nature" العالمية تنشر دراسة الإمارات حول استخدام الكلاب الجمركية في الكشف عن "كوفيد-19"
  • مجلة "Nature" العالمية تنشر دراسة الإمارات حول استخدام الكلاب الجمركية في الكشف عن "كوفيد-19"

ابوظہبی ، 9 جون ، 2021 (وام) ۔۔ دنیا میں سائنس کے مایہ ناز جریدہ کمیونیکیشنز بائیالوجی نے جون 2021 کیلئے شائع کی گئی اپنی جلد 4:686 میں متحدہ عرب امارات کی اس کامیابی پر سائنسی پیپر شائع کیا ہے جوکہ کووڈ 19 سے پاک افراد کی نشاندہی کیلئے کے 9 یونٹ بنانے کی مہارت سے متعلق ہے ، اس سے پی سی آر ٹیسٹنگ کی تکنیک کو بھی تقویت نصیب ہوئی ۔ اس جریدہ کو " نیچر فاؤنڈیشن " کی جانب سے شائع کیا جاتا ہے – وفاقی کسٹمز اتھارٹی نے ہائیر کالج فار ٹیکنالوجی کے تعاون سے گزشتہ برس اپنی نوعیت کا پہلا سائنسی پیپر عالمی سطح پر حاصل کرنے میں کامیابی پائی جوکہ کووڈ 19 کے وائرس سے پاک افراد کی نشاندہی کیلئے کے 9 کتوں کو شامل کرنے سے متعلق تھا ۔ یہ سدھائے ہوئے کتے ، لوگوں کا پسینہ سونگھ کر ایسے افراد کی نشاندہی کرتے تھے اور ان کی کامیابی کی شرح 2ء98 فیصد رہی جوکہ قابل ذکر سائنسی پیشرفت ہے ، اس سے دنیا بھر میں اس وائرس سے نمٹنے کی کاوشوں اور اقدامات کو بھی تقویت ملی – نیچر فاؤنڈیشن کے مطابق اس تحقیق میں کووڈ 19 کے تشخیصی مراکز آنے والے 3290 افراد سے پی سی آر ٹیسٹ کے نمونے حاصل کیئے گئے اور پھر انہیں رضاکارانہ طور پر اپنے پسینے کے نمونے دینے کیلئے بھی کہا گیا ۔ یہ پسینہ نمونہ بغل سے حاصل کیا جاتا تھا اور اس سے کے 9 کتوں کی صلاحیت اور اسکی درستگی کو جانچا گیا – تحقیق کے مطابق ان کتوں کی مدد سے حاصل نتائج 2ء98 فیصد درست تھے جوکہ وائرس سے پاک افراد کی شناخت اور جانچ کا اعلی ترین معیار بنتا ہے ۔ اس سے دیگر امور کے ساتھ فوری اور جلد تشخیص کے تناظر میں بھی گرانقدر سہولت میسر آئی – ایف سی اے کے چیئرمین اور کمشنر کسٹمز علی سعید مطر النیادی کا کہنا تھا کہ کووڈ 19 کی اس ماہرانہ انداز میں تشخیص سے متعلق عالمی جریدہ میں ایسا سائنسی پیپر شائع ہونا متحدہ عرب امارات کی قیادت کے اس عزم کا اظہار ہے جوکہ وہ انسانیت کی خدمت ، ہنگامی حالات ، بحران ، آفات سے نمٹنے اور متحد قوم کی اقدار اور اصولوں کیلئے کوئی بھی کسر اٹھا نہ رکھنے کیلئے ہے – عبدالطیف الشامسی نے ایچ ٹی سی کے ڈائریکٹر کو مبارکباد دی اور ایف سی اے اور ایچ ٹی سی کے درمیان مشترکا سائنسی ٹیم کی کاوش کو سراہا جبکہ ٹیم کے سربرہ پروفیسر محمد الحاج علی کی بھی تعریف کی – ایف سی اے کے ڈی جی احمد عبداللہ بن لاحج الفلاسی نے کہا کہ کے 9 کتوں کی سونگھنے کی اس صالاحیت سے وقت اور کاوشوں کو بچانے میں بہت مدد ملی ، یہ اس عالمی وباء سے نمٹنے اور اقتصادی و معاشی بحالی کے عمل میں حکومتی اقدامات کیلئے بھی بہت معاون رہا ۔ انہوں نے بتایا کہ تحقیقی اداروں کے درمیان شراکت داری اور نجی شعبہ ، اتھارٹی کیلئے ایسے سٹریٹجک ستون ہیں جو کہ سلامتی ، اقتصادی و سماجی کردار اور ریاستی مسابقت کے ساتھ ترقیاتی اقدامات کی خاطر اسکی صلاحیتوں کو تقویت بخشتے ہیں – ترجمہ ۔ تنویر ملک – http://wam.ae/en/details/1395302941994

WAM/Urdu