بدھ 01 دسمبر 2021 - 8:28:06 شام

متحدہ عرب امارات کے لیے مربوط عالمی کوششوں کو فروغ دینے پرپی اے ایم ایوارڈ شیخ سیف بن زاید نے وصول کیا

  • سيف بن زايد يتسلم جائزة الجمعية البرلمانية للبحر الأبيض المتوسط تقديراً لدور الإمارات في تعزيز العمل العالمي التكاملي
  • سيف بن زايد يتسلم جائزة الجمعية البرلمانية للبحر الأبيض المتوسط تقديراً لدور الإمارات في تعزيز العمل العالمي التكاملي
  • سيف بن زايد يتسلم جائزة الجمعية البرلمانية للبحر الأبيض المتوسط تقديراً لدور الإمارات في تعزيز العمل العالمي التكاملي
  • سيف بن زايد يتسلم جائزة الجمعية البرلمانية للبحر الأبيض المتوسط تقديراً لدور الإمارات في تعزيز العمل العالمي التكاملي

روم، 20 نومبر، 2021 (وام) ۔۔ نائب وزیر اعظم اور وزیر داخلہ لیفٹیننٹ جنرل شیخ سیف بن زاید آلنھیان نے مربوط عالمی کوششوں کو فروغ دینے میں متحدہ عرب امارات کے اہم کردار کے اعتراف میں بحیرہ روم کی پارلیمانی اسمبلی (پی اے ایم) کا ایوارڈ وصول کیا۔ یہ ایوارڈ شعبہ صحت اور صف اول کے ہیروز کی مدد کرنے پر متحدہ عرب امارات کے اہم اقدامات کا بھی اعتراف ہے۔ یہ ایوارڈ اٹلی کے دارالحکومت روم میں منعقدہ پی اے ایم کے مکمل اجلاس کے موقع پر دیا گیا جس میں پی اے ایم کے سیکرٹری جنرل سرجیو پیازی، جنرل سیکرٹریٹ کے اراکین کے ساتھ ساتھ عہدیداروں اور بین الاقوامی انجمنوں اور تنظیموں کے نمائندوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ تقریب کے دوران شیخ سیف نے بتایا کہ ابوظہبی کے ولی عہد اور متحدہ عرب امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر عزت مآب شیخ محمد بن زاید آلنھیان کی ہدایت پر متحدہ عرب امارات نے واٹر فال ایوارڈ کے پہلے ایڈیشن کا آغاز کیا جو دنیا بھر میں 50 ڈاکٹرز اور ان کے اہل خانہ کو دیا جائے گا جنہوں نے انسانی ہمدردی کی خدمات فراہم کرتے ہوئے اپنی معاشرے کے افراد کی حفاظت اور صحت کے تحفظ خصوصاً کووڈ19 کی وبا کے دوران قربانیاں دی ہیں۔ یہ ایوارڈ فرنٹ لائن ورکرز کی خدمات کا اعتراف اور ان کے کردار، قربانیوں اور لگن کو سراہنے کی عالمی کوششوں میں متحدہ عرب امارات کے تعاون کا حصہ ہے۔ شیخ سیف نے تقریب سے اپنے خطاب میں متحدہ عرب امارات کی قیادت، حکومت اور عوام کی جانب سے بحیرہ روم کی پارلیمانی اسمبلی اور دونوں ممالک کے عوام کو مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے شعبہ طب کے عظیم پیشروؤں ہپوکریٹس، ابوسینا، الرازی اور ابن الہیثم کا ذکر کرتے ہوئے طبی سائنس میں ان کے شاندار کردار کو سراہا جنہوں نے اپنے وقت میں بڑی کامیابیاں حاصل کیں۔ شیخ سیف نے متحدہ عرب امارات کے مسلسل انسانی ہمدردی کے اقدامات کا حوالہ دیا جن کا مقصد فرنٹ لائن ہیلتھ کیئر ورکرز کی کوششوں کی حمایت اور صدر عزت مآب شیخ خلیفہ بن زاید آلنھیان کے وژن اور نائب صدر، وزیر اعظم اور دبئی کے حکمران عزت مآب شیخ محمد بن راشد المکتوم اور عزت مآب شیخ محمد بن زاید آلنھیان کی حمایت کی بنیاد پر عمومی طور پر عالمی صحت کے شعبے کی مدد کرنا ہے۔ انہوں نے اعلان کیا کہ قابل اعتماد قیادت کی ہدایت کے تحت متحدہ عرب امارات نے دنیا کے لیے واٹر فال اقدام کے ساتھ ساتھ متعدد بین الاقوامی شراکت داروں کے تعاون سے پہلا واٹر فال ایوارڈ بھی شروع کیا جو دنیا بھر کے 50 ڈاکٹروں اور ان کے اہل خانہ کو انکی کوششوں کے اعزاز میں دیا جائے گا۔ شیخ سیف نے بتایا کہ متحدہ عرب امارات کے اقدامات سے دنیا بھر کے 10 لاکھ سے زیادہ ڈاکٹروں کو فائدہ ہوا ہے، اور یہ انسان دوست اقدام بین الاقوامی شعبہ صحت اور تعلیمی اداروں کے 87 شراکت داروں کی مشترکہ کوششوں کے بغیر ممکن نہیں تھا۔ بحیرہ روم کی پارلیمانی اسمبلی اپنے ایوارڈز ان ممالک، افراد، اداروں یا تنظیموں کو دیتی ہے جو خطے اور دنیا بھر کے لوگوں کے درمیان تعاون قائم کرتے ہوئے لوگوں کے درمیان باہمی افہام و تفہیم، احترام اور تعاون کو بڑھانے کے لیے بین الاقوامی انسانی خدمات انجام دیتے ہیں۔ تقریب میں اٹلی میں متحدہ عرب امارات کے سفیر عمر عبيد الحسن الشامسي اور اور پولیس کے اعلیٰ افسران بھی موجود تھے۔ ترجمہ۔تنویر ملک http://wam.ae/en/details/1395302994767

WAM/Urdu