اتوار 22 مئی 2022 - 5:15:15 شام

220 نئی فیکٹریوں کی پیدوار کے ساتھ متحدہ عرب امارات کی صنعتی برآمدات 120 ارب درہم تک پہنچ گئیں:سلطان الجابر


ابوظہبی، 27 جنوری، 2022 (وام) ۔۔ متحدہ عرب امارات کے صنعتی شعبے کی نمو اور ترقی میں کامیابی کے ساتھ اضافہ ہوا اور وزارت صنعت و جدید ٹیکنالوجی کی زیر نگرانی غیر ملکی منڈیوں میں ملک کی صنعتی برآمدات کی مالیت تاریخی اضافے کے ساتھ 2021 میں تقریباً 120 ارب درہم (تقریباً 33ارب ڈالر) تک پہنچ گئی۔ وفاقی کونسل کے اجلاس میں متحدہ عرب امارات کے صنعتی شعبے کی ترقی کے حوالے سے صنعت و جدید ٹیکنالوجی کے وزیر ڈاکٹر سلطان بن احمد الجابرنے اظہارخیال کیا۔اجلاس میں جدید ٹیکنالوجی کی وزیر مملکت سارة بنت يوسف الأميري نے بھی شرکت کی۔ الجابر نے کہاکہ اپنے قیام کے صرف ایک سال میں متحدہ عرب امارات میں صنعتی شعبے کی حمایت اور اس کو فروغ دینے کے ساتھ ساتھ اسٹارٹ اپس اور کاروباری اداروں، ایس ایم ایز، اور بڑے اداروں کے کردار کو فروغ دینے کے لیے وزارت اوراس کی ٹیم کی کوششوں کو ظاہر کرتی ہیں۔ انہوں نے بتایاکہ متحدہ عرب امارات کی صنعتی برآمدات میں نمایاں اضافہ 2021 میں پیداواری کارخانوں میں بڑے اضافے کے ساتھ ہوا، جس میں 220 نئے فیکٹریوں نے خدمات فراہمی کا آغاز کیا۔ ان فیکٹریوں نے متحدہ عرب امارات کی جامع قومی حکمت عملی برائے صنعت و جدید ٹیکنالوجی سے فائدہ اٹھایا، جس کا مقصد جی ڈی پی میں صنعتی شعبے کی شراکت کو 2031 تک 133 ارب درہم سے 300ارب درہم تک لے جانا ہے۔ نیشنل ان کنٹری ویلیو (آئی سی وی) پروگرام کے حوالے سے الجابر نے بتایا کہ پروگرام کی مدد سے مقامی کمپنیوں کی ترقی سے41ارب درہم(11ارب ڈالر) دوبارہ مقامی مارکیٹ میں منتقل کئے گئے۔مزید یہ کہ 45 سرکاری اور 13 بڑے قومی ادارے اور کمپنیاں نیشنل آئی سی وی پروگرام میں شامل ہوئیں۔ انہوں نے مزید بتایاکہ وزارت نے یو اے ای انڈسٹری 4.0 پروگرام کا بھی آغاز کیا جس کا مقصد جدید ٹیکنالوجی کا استعمال، پیداواری صلاحیت ، مسابقت اور کارکردگی کو تیز کرنا ہے۔ 2021 میں، 200 کمپنیوں کے 2022 کے وسط تک جائزہ کے سمارٹ انڈسٹری ریڈینس انڈیکس پلان کے تحت 104 کمپنیوں کا جائزہ مکمل کیا گیا۔ انہوں نے صنعتی ترقیاتی کونسل کے قیام کے حوالے سے بھی آگاہ کیا جس کا مقصد صنعت اور جدید ٹیکنالوجی کے لیے قومی حکمت عملی کے نفاذ اور پیشرفت کی نگرانی کرنا ہے۔ اتحاد کریڈٹ انشورنس کے ساتھ مل کر عالمی منڈیوں میں متحدہ عرب امارات کی برآمدات کے لیے مالیاتی اقدامات کا ایک سیٹ، ایس ایم ایز کے لیے قرض واپسی کی ضمانتیں اور اسٹارٹ اپس کے لیے دانش حقوق املاک کو محفوظ بنانے کے لیے پروگرام فراہم کیے جا رہے ہیں۔ ترجمہ۔تنویر ملک https://wam.ae/en/details/1395303015491

WAM/Urdu